ممبئی حملہ کیس: کوئی گواہ شہادت ریکارڈ کرانے پیش نہ ہوا، دوبارہ طلبی

07 جولائی 2013

اسلام آباد (آن لائن) ممبئی حملہ کیس کی سماعت بیس جولائی تک ملتوی کر دی گئی، ایف آئی اے پراسیکیوٹر چودھری اظہر سیکورٹی خدشات کے باعث ہفتہ کو بھی عدالت میں پیش نہیں ہوئے۔ انسداد دہشت گردی اسلام آباد کی عدالت کے جج کوثر عباس زیدی نے ممبئی حملہ کیس کی سماعت کی۔کوئی بھی گواہ شہادت ریکارڈ کرانے کے لئے عدالت میں پیش نہ ہوا۔ عدالت نے چار گواہوں کو جرح کے لیے طلبی کے سمن جاری کر رکھے ہیں تاہم عدالتی سمن کی تعمیل نہیں کی گئی اور کوئی بھی گواہ شہادت ریکارڈ کرانے کے لئے عدالت میں پیش نہیں ہوا۔ عدالت نے گواہوں کی دوبارہ طلبی کے سمن جاری کر دیئے۔ ایف آئی اے پراسیکیوٹر چودھری اظہر سکیورٹی نہ ملنے پر ہفتہ کو بھی عدالت پیش نہیں ہوئے۔ان کی عدم حاضری کی وجہ سے گواہوں پر جرح کی اجازت کیلیے بھجوایا گیا۔ بھارتی مراسلہ بھی عدالت پیش نہیں کیا جا سکا۔ ممبئی حملہ کیس میں تفتیشی افسر محمد طارق کو تبدیل کر کے محمد غفار کو نیا تفتیشی افسر تعینات کر دیا گیا۔ملزمان کے وکیل ریاض اکرم چیمہ کا کہنا تھا کہ پراسیکیوٹر کو سکیورٹی فراہم نہ کرنا ٹرائل میں تاخیر کا سبب بن سکتا ہے۔عدالت نے مقدمے کی سماعت بیس جولائی تک ملتوی کر دی۔

مری بکل دے وچ چور ....

فاضل چیف جسٹس کے گذشتہ روز کے ریمارکس معنی خیز ہیں۔ کیا توہین عدالت کا مرتکب ...