منچن آباد اور جوہرآباد میں 3 بچے ڈوب کر جاںبحق

07 جولائی 2013

 منچن آباد + جوہرآباد (نامہ نگاران) دریائے ستلج میں نہانے کے دوران دو بچے ڈوب کر جاںبحق ہو گئے۔ تھانہ گھمنڈ پورکی حدود میں واقع نواحی علاقے بھنڈی لالیکا میں دو کمسن بچے 8 سالہ مسرت اور 10 سالہ خالد دریائے ستلج میں نہانے کے دوران ڈوب کر ہلاک ہو گئے۔ کئی گھنٹوں کی کوششوں کے بعد دونوں بچوں کی نعشوں کو دریا سے نکال لیا گیا۔ جوہرآباد سے نامہ نگار کیمطابق نواحی گاﺅں جلالپور میں 13 سالہ محمد عمران جو کہ میٹرک کا طالبعلم ہے دریا کی لہروں کی زد میں آکر اپنی جان کی بازی ہار گیا۔ محمد عمران نہاتے ہوئے اچانک گہرے پانی میں چلے جانے سے لہروں کی زد میں آگیا۔آخری اطلاع آنے تک اس کو دریائے سے نہیں نکالا جا سکا۔ واقعہ کی اطلاع ملتے ہی ارد گرد کے شہریوں سمیت اہل دیہہ بھی بچے کو دریا سے نکالنے میں مصروف عمل رہے۔ ٹھٹھہ میں ایک واقعہ کے دوران دریائے سندھ میں جنگی سر کے مقام پر 10 نوجوان ڈوب گئے تاہم غوطہ خوروں نے 9 نوجوانوں کو بچالیا جبکہ ایک کی تلاش جاری ہے۔
ڈوب گئے