”یورپی یونین کی جاسوسی“ امریکہ کے ساتھ تعلقات نازک دور سے گزر رہے ہیں‘ اعتماد ختم ہو چکا : داخلی امور کمشنر برائے یورپی یونین

07 جولائی 2013

 برسلز(ثناءنیوز)یورپی یونین کے حکام نے امریکہ کو متنبہ کیا ہے کہ اگر وہ معلومات کی پرائیویسی کے حوالے سے یورپی یونین کے ضابطوں کا احترام نہیں کرے گا تو اس مناسبت سے طے شدہ دو معاہدوں کو معطل کر دیا جائے گا۔ یورپی یونین کی داخلہ امور کی کمشنر سیسیلیا مالم اسٹروم (Cecilia Malmstrom) نے دو اعلی امریکی عہدے داران کو خصوصی خط تحریر کئے ہیں۔ اس میں امریکہ کی جانب سے انٹرنیٹ صارفین اور یورپی یونین کی جاسوسی کے حوالے سے یورپی اقوام میں پائی جانے والی بے چینی کا خاص طور پر حوالہ دیا گیا ہے۔ ان میں سے ایک یورپی مالیاتی ترسیل کے ڈیٹا تک رسائی اور دوسرا یورپ کے مسافروں کی تفصیلات سے متعلق ہے۔ یہ دونوں معاہدے ستمبر 2001 ءکے دہشت گردانہ واقعات کے بعد عمل میں آئے تھے۔ امریکہ کی جانب سے انٹرنیٹ صارفین اور یورپی یونین کی جاسوسی کے حوالے سے یورپی اقوام میں بے چینی پائی جاتی ہے امریکی اعلی حکام کو یورپی یونین کی داخلہ امور کی کمیشنر سیسیلیا مالم اسٹروم نے تحریر کیا ہے کہ فریقین دونوں معاہدوں کے نفاذ کے فوائد کے حصول میں ناکام ہوتے دکھائی دے رہے ، اب ان کی مجموعی حیثیت کو سنگین دھچکے محسوس ہوئے ہیں اور وہ ان پر نظرثانی کا حق رکھتی ہیں۔ سیسیلیا مالم اسٹروم نے ایک خط امریکہ کی اندرون ملک سلامتی کی وزیر جینیٹ نیپولیٹانو اور دوسرا نائب وزیر برائے دہشت گردی اور مالیاتی انٹیلیجینس ڈیوڈ کوہن کو تحریر کیا۔سیسیلیا مالم اسٹروم نے اپنے خطوط میں واضح کیا کہ امریکہ اور یورپی یونین کے تعلقات انتہائی نازک دور سے گزر رہے ہیں۔ باہمی اعتماد اور اعتبار پوری طرح نابود ہو کر رہ گیا ہے۔ انہوں نے امید ظاہر کیکہ امریکہ اعتماد سازی اور اعتبار کی بحالی کے لئے راست اقدامات کرے گا۔
یورپی یونین /تعلقات