مقبوضہ کشمیر : بھارتی مظالم کے خلاف مظاہرے اور جھڑپیں جاری‘ متعدد افراد زخمی

07 جولائی 2013

سرینگر (آن لائن) مقبوضہ کشمیر میں سینکڑوں افراد نے بھارتی فوج کے مظالم کے خلاف احتجاجی مظاہرے کئے۔متعدد مقامات پر احمد گنانی اور طارق احمد کی غائبانہ نماز جنازہ ادا کی گئی ۔ سکیورٹی فورسز نے مظاہرین پر لاٹھی چارج اور آنسو گیس کی شیلنگ کی ۔ مظاہرین کے پتھراﺅ میں پانچ پولیس اور دو فوجی اہلکاروں سمیت متعدد افراد زخمی ہوگئے۔ایک نوجوان تشویشناک حالت میں ہسپتال داخل کرا دیا گیا ۔تفصیلات کے مطابق مقبوضہ وادی کے مختلف علاقوں میں بھارتی فوج کے مظالم اور معصوم شہریوں کی ہلاکتوں کے خلاف سینکڑوں افراد نے احتجاجی مظاہرے کئے ۔فورسز نے مظاہرین کو منتشر کرنے کے لئے ان پر لاٹھی چارج کیا اور آنسو گیس کا استعمال کیا۔ اس دوران مظاہرین نے جوابی پتھراﺅ بھی کیا جس کے نتیجے میں متعدد افراد زخمی ہو گئے جن میں ایک نوجوان کی حالت تشویشناک بتائی جاتی ہے۔تاہم پوری وادی میںصورت حال پرامن رہی اور کوئی بڑا ناخوشگوار واقعہ پیش نہیں آیا۔ ادھر بانڈی پورہ میں ایک احتجاجی جلوس نکالا گیا اور ملزمان کے خلاف سخت کارروائی کا مطالبہ کیا گیا۔ جنوبی کشمیر کے پلوامہ، کولگام اور ہنت ناگ میں ممکنہ احتجاجی مظاہروں کے پیش سخت ترین سکیورٹی انتظامات کئے گئے تھے تاہم ان اضلاع میں احتجاج کی کوئی اطلاع نہیں جبکہ جنوبی کشمیر کے ضلع شوپیاں میں نوجوانوں نے ہلاکتوں کے خلاف احتجاج کیا۔