آئی ایم ایف سے سود پر قرض لیکر ملکی مسائل حل نہیں کئے جا سکتے: خالد شہزاد فاروقی

07 جولائی 2013

لاہور (خصوصی نامہ نگار) جمعیت اہلِ حدیث پاکستان کے مرکزی رہنماءحافظ خالد شہزاد فاروقی نے کہا ہے کہ آئی ایم ایف سے 3فیصد سود کی شرط کے ساتھ 5ارب 30کروڑ ڈالر حاصل کر کے ملکی مسائل کو حل نہیں کیا جا سکتا بلکہ حکومت کا یہ اِقدام ”اللہ کے مزید غضب“ کو دعوت دینے کا موجب بنے گا ،اِن خیالات کا اِظہار اُنہوں نے جمعیت اہلِ حدیث پاکستان کے مرکزی راہنماﺅں علامہ پروفیسر مولانا ثناءاللہ بھٹی،مولانا حافظ محمد انور ساجد ،حافظ محمد علی یزدانی ،علامہ مولانا محمد اصغر فاروق ،مولانا عبدالقیوم ظہیر،مولانا عبدالوحید سلفی،میاں عامر بشیراور دیگر راہنماﺅں کے ساتھ مین مارکیٹ گلبرگ میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے کیا ۔حافظ خالد نے کہا کہ نام نہاد ”مسلم “لیگی حکومت سُودی نظام کی لعنت کو ختم کرنے کی بجائے دنیا بھر میں ”کشکول تھامے“ سُود ی قرضے حاصل کرنے کے لئے کوشاں ہیں۔