عوام مہنگائی کے نئے طوفان کا سامنا کرنے کیلئے تیار رہیں: نوید قمر

07 جولائی 2013

لاہور (خبر نگار) سابق وزیر خزانہ اور پےپلز پارٹی کے مرکزی رہنما نوےد قمر نے عوام کو خبردار کےا ہے کہ وہ مہنگائی کے اےک نئے طوفان کا سامنا کرنے کے لئے تےار رہےں جس کا آغاز آئی اےم اےف کے ساتھ موجودہ حکومت کے حالےہ معاہدہ پر عملدرآمد کے نتےجہ مےں پہلے ہی شروع ہو چکا ہے۔ آسمان کو چھوتی اشےائے خوردونوش کی قےمتوں سے رمضان المبارک کے مقدس مہےنے کے شروع ہوتے ہی عام آدمی کی زندگی اور اجےرن ہو جائیگی۔ اُنہوں نے کہا نئے ٹےکس عائد کرنے کے علاوہ بجلی کے ٹےرف کو بڑھانے اور پٹرولےم مصنوعات کی قےمتوں مےں اضا فہ سے روز مرّہ استعمال کی اشےا کی قےمتوں مےں مزےد اضافہ ہوگا۔ آئی اےم اےف کی شرائط کی وجہ سے روپے کی قدر مےں کمی کو روکنا ناممکن ہو گا۔ وزیر خزانہ اسحاق ڈار نے چارٹرڈ اکاﺅنٹنٹ ہونے کے ناطے لوگوں کو جھانسہ دےنے کی ناکام کوشش کی ہے لیکن مےڈےا نے اُن کے اعداد و شمار کے پنڈورا باکس کو بے نقاب کر دےا ہے۔ اُنہوں نے کہا کہ گردشی قرضے کی ادائےگی کیلئے وفاقی حکومت نے مالی سال 2012-13ءکے آخری ماہ جون مےں 320 ارب مالےت کا غےر معمولی قرضہ حاصل کےا ہے مگر باشعور عوام جانتے ہےں کہ اس خطےر حکومتی قرضہ کے نتےجے مےں مالی خسارہ 6.5 فےصد سے بڑھ کر 9 فےصد ہو گےا ہے جس مےں پےپلز پارٹی کی سابق حکومت کا کوئی کردار نہےں ہے۔ نوےد قمر نے کہا ےہ امر سمجھ سے بالاتر ہے بجلی پےدا کرنے والی کمپنےوں کو اربوں روپے کی ادائےگی کے باوجود لوڈشےڈنگ کے دورانےے مےں کےوں کمی واقع نہےں ہو رہی؟