گٹکا پھیپھڑوں اور منہ کی بیماریوں کا باعث بنتا ہے: ذوالفقار حسین

07 جولائی 2013

لاہور (سپیشل رپورٹر) کنسلٹنٹ انسداد منشیات مہم سید ذوالفقار حسین نے کہا ہے کہ انڈین گٹکے کے ساتھ ساتھ پاکستان تیار کردہ گٹکا کا استعمال بہت زیادہ ہے۔ ہزاروں پان اور سگریٹ کی دوکانوں پر یہ گٹکا آسانی دستیاب ہے۔ لاہور میں دو بڑی پارٹیاں داتا دربار کے علاقے میں دیسی گٹکا تیار کرکے کلو کے حساب سے فروخت کرتی ہیں۔ ڈی سی او لاہور نسیم صادق کی سربراہی میں گٹکے کے خلاف شروع مہم خوش آئند ہے۔ اس کو کئی مہینے پہلے شروع کرنا چاہئے تھا۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے لاہور میں گفتگو کرتے ہوئے کیا۔ انہوں نے مزید کہا شیشہ کیفے کی طرح گٹکے میں بھی نشہ ہے جو انسان کو اعصابی تھکاﺅ‘ ڈپریشن کو کم کرنے میں مدد ضرور دیتا ہے مگر چند ماہ میں یہ انسان کے جسم کو کمزور سوچنے سمجھنے کی صلاحیتوں کو ختم اور روزمرہ کے کام پر اثرانداز ہوتا ہے۔ انہوں نے کہا لاہور میں انڈین گٹکے کی فروخت زیادہ نہیں مگر مقامی سطح پر تیار گٹکے کا استعمال 70% زیادہ ہے جو پھیپھڑوں‘ معدہ‘ گلے‘ دانتوں اور منہ کی بیماریوں کا باعث بنتا ہے۔