بیلجیئم : پولیس پر حملہ دہشت گردی کا واقعہ ہے:وزیراعظم

07 اگست 2016 (13:12)

برسلز:بیلجیئم کے وزیراعظم نے شارلروآ شہر میں مسلح شخص کے پولیس پر حملے کو دہشت گردی کا واقعہ قرار دیا ہے۔بیلجیئم کے شہر شارلروآ میں حکام کے مطابق خنجر سے مسلح ایک حملہ آور نے دو پولیس اہلکاروں کو زخمی کر دیا ہے۔ حکام کا کہنا ہے کہ پولیس اہلکاروں کی حالت خطرہ سے باہر ہے۔حکام کے مطابق حملہ آور نے شارلروآ کے مرکزی پولیس سٹیشن کے باہر پولیس اہلکاروں پر خنجر سے حملہ کرتے وقت اللہ اکبر کا نعرہ لگایا۔پولیس نے واقعے کے بعد علاقے کو گھیرے میں لے لیا ہے۔اطلاعات کے زخمی ہونے والے دو اہلکاروں میں سے ایک خاتون ہے اور انھیں اپنے ساتھی اہلکار سے زیادہ زخم آئے ہیں۔پولیس کی جوابی فائرنگ میں زخمی ہونے والے مسلح حملہ آور ہسپتال میں دم توڑ گیا ہے۔خیال رہے کہ گذشتہ ماہ جولائی کی 30 تاریخ کو بیلجیئم میں انسداد دہشت گردی کے ایک آپریشن میں دو بھائیوں کو ملک میں حملوں کی منصوبہ بندی کرنے پرگرفتار کیا گیا تھا۔بیلجیئم مارچ میں ہونے والے حملوں کے بعد ابھی بھی ہائی الرٹ پر ہے.مارچ میں ایئرپورٹ اور میٹرو سٹیشن پر ہونے والے حملے میں کم از کم 32 افراد ہلاک ہوئے تھے۔خود کو دولتِ اسلامیہ کہلانے والے شدت پسند تنظیم نے اس حملے کی ذمہ داری قبول کی تھی۔