بلو چستان کی ابتر اور پسماندہ صورتحال

06 نومبر 2016

ادارہ برائے امن و معاشیات کی ریسرچ کے مطابق پاکستان پانچ ممالک کی فہرست میںآتاہے جہاں سب سے زیادہ دہشتگردی ہے جس کے نتیجے میں لوگ اپنی قیمتی جانوں سے ہاتھ دھو بیٹھتے ہیں ۔ پاکستان میں دہشتگردی سے سب سے زیادہ متاثر بلو چستان ہے۔حال ہی میںہونے والے دھماکے میں (60 ) ساٹھ سے زائد افرادشہید ہو گئے ۔ بلوچستان کے عوام کو ایک دوسرے کی لا شیں اٹھا نے کے لئے چھوڑ دیا گیا ہے ۔ سال ہا سا ل سے پسماندہ اور بد حا لی کا شکا ر بلوچستان کو نہ ہی تر قی دی جا تی ہے اور نہ ہی دہشتگردی ختم کرنے کے وعدے پو رے کئے جاتے ہیں ۔ بلو چستان قیمتی معدنیا ت سے مالا مال ہے قدرتی وسائل کوجب بلوچستان میںدریافت کیا جاچکا ہے ۔ جس میں تیل ، تانبا ، سونا ، قدرتی گیس ، کر وما ئیٹ ، کو ئلہ ، قیمتی پتھر ، کالے مو تی ، وغیرہ شامل ہیں بلو چستان کے قدرتی وسائل بلوچی عوام کی فلا ح و بہبو د کے لئے کا فی ہیں اور صوبے میں غربت ختم کرنے کے لئے کافی ہیں ۔ بلو چستان کو کسی بیر ونی امداد کی ضرورت نہیں ۔ بلو چستان کے ان قد ر تی وسائل کو بے دلی سے دوسرے صو بو ں کی فلا ح و بہبود پر لگا دیا جا تا ہے ۔ اور بلوچستان کی social economicترقی پر کوئی سرمایہ کاری نہیں کی جا تی۔ بلو چستان کے عوام تعلیم ہسپتال ، آفس سمیت دیگر بنیا دی سہولیا ت سے محروم ہیں بلو چستان میں literacy rate سب سے کم ہے ۔ بلو چستان کے عوام کو صاف پانی تک میسر نہیں اکثر علاقوں میں انسان اور جانور ایک ہی پانی استعمال کر تے ہیں ۔ ڈیر ہ بگٹی کے علا قے میںقدرتی گیس کثیر تعدا د میں مو جو د ہے لیکن یہاں کے رہا ئشیوں کو اس کا کوئی فائدہ نہیں گیس دوسرے صوبو ں کو export ایکسپورٹ کر دی جا تی ہے ۔ اور بلوچستان کے اکثر عوام لکڑیوں پر کھا نا پکا تے ہیں ۔ بلو چستان میں بھا رتی مد اخلت کے ثبو ت بھی مو جو د ہیں ۔ کئی فورم پر بلو چستان کے لئے آواز بھی اٹھا ئی گئی لیکن کوئی فائدہ ہوتے نظر نہیں آیا ۔ بلوچستان کے عوام کے حقوق غضب کئے جارہے ہیں ۔ پا کستان بننے سے لے کر آج تک بلو چستان کے عوام زبو حالی کا شکا ر، پسماندگی اور بنیادی سہو لیا ت سے محروم ہیں ۔ لہذا سب سے پہلے پاکستان حکو مت کو اس کا نوٹس لینا چاہیے ۔ اس کے قدرتی وسائل کوان ہی کی عوام پر بھی لگانا چا ہیے ۔ بلو چستان کو تمام صو بو ں کی طر ح حقو ق دینے چاہیئں ۔ ( عدیرہ افضل ۔کراچی )