سندھ طاس معاہدے کی خلاف ورزی، بھارت کا شاہ پور کنڈی ڈیم کی تعمیر دوبارہ شروع کرنیکا فیصلہ

06 مارچ 2017

نئی دہلی + سری نگر (کے پی آئی) بھارتی حکومت نے سندھ طاس معاہدے کی خلاف ورزی کرتے ہوئے شاہ پور کنڈی ڈیم پراجیکٹ کے رکے ہوئے کام کو دوبارہ شروع کرنے کا فےصلہ کےا ہے یہ پراجیکٹ پاکستان اور بھارت کے درمیان سندھ طاس معاہدے کے تحت تعمیر نہیں کیا جا سکتا۔ 206میگا واٹ بجلی پیدا کرنے کی صلاحیت رکھنے والے اس منصوبے کی منظوری مئی 1999 میں دی گئی تھی لیکن پنجاب اور مقبوضہ کشمیر کے درمیان اس پراجیکٹ کے حوالے سے شدید اختلافات پیدا ہو گئے تھے اور 2014 میں پراجیکٹ کی تعمیر رک گئی تھی۔ گورداسپور میں پٹھانکوٹ کے مقام پر شاہ پور کنڈی ڈیم کے رکے ہوئے کام کو دوبارہ شروع کرنے کے لئے بھارتی پنجاب اور مقبوضہ کشمیر کی حکومتوں نے معاہدے کر لئے ہیں۔ اس ہائیڈرو الیکٹرک پروجیکٹ پر اس وقت کام بند ہو گیا تھا جب دونوں ریاستوں میں ڈیم کے ڈیزائن اور پانی کی تقسیم اور دیگر معاملات پر اختلافات پیدا ہوگئے تھے، اب مذکورہ ڈیم پر تعمیر کا کام بہت جلد شروع ہونے جارہا ہے۔ سرکاری بیان میں کہا گیا جموں و کشمیر کے سیکرٹری اریگیشن اور انکے ہم منصب پنجاب کے اریگیشن سیکرٹری کے ایس پنو کے درمیان نئی دہلی میں ایک مفاہمتی یادداشت پر دستخط ہو گئے ہیں۔