ماموں کانجن: مقابلے میں سی ٹی ڈی انسپکٹر شہید، ڈی ایس پی سمیت 2اہلکار زخمی

06 مارچ 2017

لاہور + پاکپتن (آن لائن + نامہ نگار + نوائے وقت نیوز) سکیورٹی فورسز کی ملک بھر میں دہشت گردوں اور مشتبہ افراد کے خلاف کارروائیاں گزشتہ روز بھی جاری رہیں‘ ماموں کانجن میں مقابلے میں سی ٹی ڈی انسپکٹر شہید‘ ڈی ایس پی سمیت 2 اہلکار زخمی ہو گئے‘ جبکہ 2 دہشت گرد بھی مارے گئے۔ پشاور اور دیگر علاقوں سے متعدد افراد کو حراست میں لے لیا گیا۔ بتایا گیا ہے پاکپتن سے ڈسٹر کٹ آفیسر سی ٹی ڈی انسپکٹر فدا حسین کی سربراہی میں ٹیم نے ماموں کانجن کے تھا نہ گڑھ کے علاقے میں واقع دربارپیر صلاح الدین بابالے شاہ پر پولیس اور انٹیلی جنس اداروں کے ہمراہ دہشت گردوں کو گرفتارکرنے کے لیے ریڈکیاتو دہشت گردوں نے فائرنگ کر دی جس سے سے ڈی او سی ٹی ڈی انسپکٹر فدا حسین، ڈی ایس پی اقبال جوئیہ‘اور ایک اہلکار شدید زخمی ہو گئے جن کو ضلع سا ہیوال کے ہسپتال میں تشویش ناک حالت کے باعث منتقل کیا جہاں انسپکٹر فدا حسین زخموں کی تاب نہ لاتے ہوئے شہید ہو گئے۔ پولیس ذرائع کے مطابق دہشت گردوں کا تعلق کالعدم تنظیموں سے بتایا جاتا ہے۔ شہید ہونے والے ڈی اوسی ٹی ڈی انسپکٹر فداحسین پاکپتن تعینات تھے۔ ٹیم ریڈ کرنے پاکپتن سے ما موں کا نجن گئی تھی۔ انسپکٹر فدا حسین کی نماز جنازہ پولیس لائن ساہیوال میں ادا کر نے کے بعد ان کی میت ان کے آبائی شہرسمندی راونہ کر دی گئی ہے۔ سی ٹی ڈی او تھانہ ہڑپہ پولیس اور تھانہ گڑھ پولیس نے دہشت گردوں کا تعاقب جاری رکھا اور بڈھ بیلہ چراہ گاہ میں مقابلہ کے دوران دہشت گرد مارے گئے۔ جبکہ دہشت گردوں کی فائرنگ کی زد میں آکر ایک کھوجی احمد یار شدید زخمی ہو گیا جسے سول ہسپتال ساہیوال داخل کرا دیا گیا۔ جہاں اسکی حالت نازک ہے۔ 4 دہشت گردوں کو گرفتار کر لیا گیا۔ گرفتار دہشتگردوں کے قبضے سے دھماکا خیز مواد اور اسلحہ برآمد کر لیا گیا۔ سی ٹی ڈی کے ترجمان کے مطابق ہلاک ہونے والے دہشت گرد کی شناخت ذیشان کے نام سے ہوئی ہے۔ لاہور کے مختلف علاقوں میں پولیس اور سی ٹی ڈی نے کومبنگ آپریشن میں 21مشتبہ افراد کو گرفتار کرلیا۔ جنہیں نامعلوم مقام پر منتقل کردیا گیا ہے۔پولیس کے مطابق زیر حراست افراد کو بائیو میٹرک تصدیق نہ ہونے پرحراست میں لیا گیا۔سی ٹی ڈی اور حساس اداروں نے چناب پارک کے قریب کارروائی کرتے ہوئے ایک مشکوک شخص کو گرفتار کر لیا اور اُس کے قبضے سے دھماکہ خیز مواد برآمد کرلیا۔ ملزم نے یہ دھماکہ خیز مواد اپنے کمپیوٹر باکس میں چھپارکھا تھا۔ گرفتار شخص کو خفیہ اداروں نے تفتیش کے لیے نامعلوم مقام پر منتقل کر دیا۔ اس آپریشن میں بم سکواڈ پولیس اور سی ٹی ڈی کے اہلکاروں نے حصہ لیا ۔پشاور کے مختلف علاقوں میں پولیس نے سرچ آپریشن کے دوران ایک اشتہاری سمیت 70 افراد کو گرفتار کرلیا۔ پشاور کے تھانہ خان رازق اور تاج آباد میں پولیس نے سرچ آپریشن کرتے ہوئے 70 افراد کوگرفتار کیا، جن میں 32 افراد کو کرایہ داری کے کوائف مکمل ہونے پر پکڑا گیا۔ آپریشن کے دوران 37 مشتبہ افراد بھی گرفتار کرلئے گئے۔ جن میں ایک اشہار بھی شامل ہے گرفتار افراد سے 2 پستول اور درجنوں کارتوس، چرس اورشراب بھی برآمد ہوئی۔ پولیس نے گرفتا ر افراد کے خلاف مقدمات بھی درج کرلئے ہیں۔