شام میں داعش کے 2 خودکش حملے،فورسز کے حامی 15جنگجو ہلاک

06 مارچ 2017

دمشق (نیٹ نیوزز + نیو ایجنسیاں)شمالی صوبے حلب میں داعش کے 2 خودکش حملوں میں 15 افراد مارے گئے اکثریت فورسز کے حامی جنگجوئوں کی ماری گئی۔ ادھر شامی فضائیہ کا جنگی طیارہ ترکی کی حدود میں گر کر تباہ ہونے کی وجوہات معلوم نہ ہوسکیں۔دوسری جانب شامی باغی گروپ احرار الشام نے فرانسیسی خبر رساں ایجنسی اے ایف پی کو بتایا کہ انہوں نے ایک حکومتی طیارے کو مار گرایا ہے جب وہ شامی صوبے ادلب کے اوپر پرواز کررہا اور فضائی حملے کررہا تھا۔ترک ریسکیو ٹیمیوں نے شامی ایئر فورس کے پائلٹ کو طیارے کو پیش آنے والے حادثے کے مقام سے 40 کلو میٹر دور زخمی حالت میں تلاش کیا۔شناخت 56 سالہ محمد صفہان کے نام سے ہوئی ہے اور اسے ہاتے کے علاقے میں ایک ہسپتال میں طبی امداد فراہم کی جارہی ہے۔ صفہان کی ریڑھ کی ہڈی میں فریکچر ہوا ہے۔ حالت خطرے سے باہر ہے۔ روسی وزیر خارجہ سرگئی نے کہا بشارالاسد کی حکومت ختم کرنے کی کسی کو اجازت نہیں دینگے۔ صدر کے مخالف گروپوں سے سازباز کا سوال ہی پیدا نہیں ہوتا۔ نائب چیئرمین دفاعی پارلیمانی کمیٹی آندرے نے کہا روس اور ترکی داعش کے خلاف مشترکہ جنگ لڑ رہے ہیں۔