فاٹا میں لڑکیوں کے تباہ سکولوں کی تعمیر نو کیلئے اقدامات جاری ہیں،وزارت سیفران

05 ستمبر 2017

اسلام آباد (اے پی پی)حکومت دہشت گردی کے خلاف جنگ کے دوران وفاق کے زیر انتظام قبائلی علاقوں میں لڑکیوں کے تباہ شدہ سکولوں کی تعمیر نو کیلئے بھرپوراقدامات کر رہی ہے۔ریاستوں اور سرحدی علاقوں کی وزارت(سیفران) کے ترجمان کے مطابق فاٹا میں لڑکیوں کے دوہزار دو سو اڑتالیس اور مخلوط تعلیم کے دو سکول ہیں جہاں لڑکیوں کو میرٹ پر داخلہ دیا جارہا ہے۔ انہوں نے کہا کہ دہشت گردی کے خلاف جنگ میں وفاق کے زیر انتظام قبائلی علاقوں میں لڑکیوں کے ایک ہزار ایک سو پچانوے سکول متاثر ہوئے جن میں سے پانچ سو پچپن مکمل طور پر تباہ اور چار سو اکیانوے سکول جزوی طور پر متاثر ہوئے۔ انہوں نے کہا کہ آٹھ سو پچانوے سکولوں کو بحال کردیا گیا ہے اور باقی سکولوں کی تعمیر نو کا کام جاری ہے۔