پنجگور: ایف سی کے قافلے پر حملہ، لیفٹیننٹ کرنل سیمت 3 اہلاکار شہید، 3 زخمی

05 ستمبر 2017

کوئٹہ/ اسلام آباد ( بیورو رپورٹ + ایجنسیاں) پنجگور اورواشک کے درمیانی علاقے شنگر میں نامعلوم افراد کے حملے میں ایف سی کے لیفٹیننٹ کرنل سمیت 3جوان شہید جبکہ کرنل سمیت3زخمی ہوگئے۔ سیکورٹی فورسز ذرائع کے مطابق پیر کی شام نامعلوم افراد نے اچانک ایف سی کے قافلے پر حملہ کردیا جس کے نتیجے میں ایف سی کے لیفٹیننٹ کرنل عامر وحید ،لانس نائیک مسعود اور سپاہی عرفان شہیدجبکہ کرنل شیجع اللہ ،حوالدار الرحمن اور سپاہی سعود شدید زخمی ہوگئے نعشوں اورزخمیوں کو مقامی ہسپتال پہنچادیا گیا شہید اور زخمی ہونے والے ایف سی اہلکاروں کا تعلق 59ونگ سے ہے ۔واقعہ کے بعد فرنٹیر کور بلوچستان اور لیویز نے پورے علاقے کی ناکہ بندی کرکے نامعلوم دہشت گردوں کی گرفتاری کیلئے بڑے پیمانے پر سرچ آپریشن شروع کردیا ہے۔وزیراعلیٰ بلوچستان نواب ثناءاللہ خان زہری نے پنجگور میں ایف سی کے کانوائے پر حملے کی شدید مذمت کرتے ہوئے حملے میںایف سی کے اہلکاروں کی شہادت پر دلی رنج و غم کااظہارکیا ہے۔ انہوں نے واقعہ کو دہشت گردی کی بزدلانہ کارروائی قرار دیتے ہوئے کہا امن دشمن عناصر اپنے مذموم مقاصد کے حصول کیلئے سیکورٹی فورسز کو نشانہ بنارہے ہیں تاہم دہشت گردوں کے مذموم مقاصد کو ناکام بنایا جائے گا۔ دہشت گرد فورسز کی کامیاب کارروائیوں سے بوکھلاہٹ کاشکار ہوکر چھپ کر حملے کررہے ہیںتاہم بچے کھچے دہشت گردوں کو جلد کیفر کردار تک پہنچایا جائے گا۔ ڈیرہ بگٹی کے علاقے میں بارودی سرنگ کے دھماکہ میں دو افراد زخمی ہوگئے۔ لیویز ذرائع کے مطابق پیر کے روز ڈیرہ بگٹی کے علاقے پیر کوہ میں موٹر سائیکل سڑک کنارے نصب بارودی سرنگ سے ٹکرا گئی۔ ضلع پنجگور کی تحصیل پرروم میں مسلح افراد نے لیویز چیک پوسٹ حملہ کیا تاہم لیویز کی جوابی کارروائی میں ایک حملہ آور زخمی حالت میں گرفتار کرلیا گیا۔ حملہ آور کی شناخت نظیرولد جان محمد کے نام سے ہوئی۔ صوبائی وزیر داخلہ میر سرفراز بگٹی نے پنجگور میں فورسز کے قافلے پر حملے کی شدید مذمت کرتے ہوئے حملے میں ایف سی کے اہلکاروں کی شہادت پر دلی رنج و غم کااظہار کیا ہے۔ اے پی پی کے مطابق وزیراعظم شاہد خاقان عباسی نے پنجگور میں سکیورٹی فورسز پر حملے کی مذمت کی۔ ایف سی اہلکاروں کی قیمتی جانوں کے ضیاع پر گہرے رنج و غم کا اظہار کیا۔ وفاقی وزیر داخلہ احسن اقبال نے بھی ایف سی اہلکاروں پر حملے کی مذمت کی ہے۔ احسن اقبال نے کہا تخریب کاروں کی مکمل شکست تک چین سے نہیں بیٹھیں گے۔ بلوچستان میں سی پیک کے اثرات سے دشمن قوتیں حواس باختہ ہوچکی ہیں۔ قوم دہشت گردی کو جڑ سے اکھاڑنے کیلئے متحد اور کمربستہ ہے۔