عید کی فلموں نے سینما گھروں کی رونقیں بحال کر دیں

05 ستمبر 2017

سیف اللہ سپرا
عید کا تہوار نئی فلموں کی ریلیز کے حوالے سے فلمی حلقوں میں نہایت اہم تصور کیا جاتا ہے۔ ہر پروڈیوسر اور ڈائریکٹر کی کوشش ہوتی ہے کہ وہ اپنی اچھی فلم عید کے موقع پر ہی ریلیز کرے اور زیادہ سے زیادہ منافع کمائے۔ اس عید پر پاکستان میں بھارت کی کوئی فلم ریلیز نہیں ہوئی صرف پاکستان کی تین نئی فلمیں ریلیز ہوئی ہیں۔ جن میں دو فلمیں پنجاب نہیں جائوں گی اور نامعلوم افراد 2 اردو کی ہیں جبکہ ایک فلم دادا پوتا پنجابی ہے۔ اس کے علاوہ ایک فلم بھائی لوگ جو فلمی حلقوں کی فرمائش پر 6 سال کے بعد دوبارہ نمائش کی گئی ۔ عید پر ریلیز ہونے والی فلموں کے حوالے سے ہم نے فلم وسینما انڈسٹری کی اہم شخصیات سے گفتگو کی جس کے منتخب حصے قارئین کی دلچسپی کے لئے پیش کئے جا رہے ہیں:
پاکستان فلم ایگزیبٹرز ایسوسی ایشن کے چیئر مین ضوریز لاشاری نے عید پر ریلیز ہونے والی فلموں پر تبصرہ کرتے ہوئے کہا کہ اس عید پر پاکستانی فلموں نے بہت اچھا بزنس کیا ہے۔ فلم پنجاب نہیں جائوں گی نے تو کامیابی کی نئی تاریخ رقم کی ہے ایک محتاط اندازے کے مطابق اس فلم نے عید کے پہلے روز 5 کروڑ روپے کا بزنس کیا ہے جو ایک ریکارڈ ہے۔ اتنا بزنس کسی بھی پاکستانی فلم نے آج تک عید کے پہلے روز نہیں کیا یہ ایک نیا ریکارڈ ہے۔ یہ فلم پاکستان کے علاوہ متحدہ عرب امارات، برطانیہ، امریکہ اور دیگر ممالک میں بھی ریلیز کی گئی اور باہر کے ممالک میں بھی اچھا بزنس کر رہی ہے۔ حیرت کی بات ہے کہ برطانیہ میں فلم پنجاب نہیں جائوں گی نے بھارتی فلم بادشاہو سے بھی زیادہ بزنس کیا ہے۔ پنجاب نہیں جائوں گی کے علاوہ نا معلوم افراد 2 نے بھی اچھا بزنس کیا ہے۔ دونوں فلمیں خوب بزنس کررہی ہیں۔ یہ امر قابل ذکر ہے کہ اس عید پر حکومت نے یہ احکامات جاری کئے کہ انڈین فلم عید پر ریلیز نہیں ہوگی اور عید کے دو ہفتے بعد ریلیز کی جائے گی۔ اس حکومتی آرڈر کا پاکستانی فلموں کو بہت فائدہ ہوا اور پاکستانی فلموں نے خوب بزنس کیا اگر عید پر کوئی بھی انڈین فلم ریلیز ہوتی تو ظاہر ہے کہ سنیما والوں نے کچھ شوز اسے دینے تھے اس طرح بزنس تقسیم ہو جاتا۔ انڈین فلم ریلیز نہ ہونے سے پاکستانی فلمسازوں کو بہت فائدہ ہوا ہے۔ اگر ہر عید پر لوکل پروڈیوسر دو تین اچھی فلمیں سنیما والوں کو دے دیں تو وہ انڈین فلم کیوں لگائیں گے۔ لہٰذا پاکستانی فلمسازوں کو چاہئے کہ ہر عید پر کم از کم 2 معیاری فلمیں ریلیز کریں۔
پاکستان فلم ڈسٹری بیوٹرز ایسوسی ایشن کے چیئر مین چودھری اعجاز کامران نے عید پر ریلیز ہونے والی فلموں پر تبصرہ کرتے ہوئے کہا کہ اس عید الاضحی پر بھارت کی فلم ریلیز نہیں ہوئی۔ صرف پاکستان کی فلمیں ریلیز ہوئی ہیں جو پاکستان کے عوام نے بہت پسند کی ہیں۔ اس کا اچھا رزلٹ نکلا ہے۔ یعنی میکلوڈ روڈ کے سنیما گھروں اور جدید سنیما گھروں میں بھی پاکستانی فلموں نے بہت اچھا بزنس کیا ہے۔ اس عید پر پاکستان کی تین نئی فلموں جن میں دو اردو فلمیں پنجاب نہیں جائوں گی اور نامعلوم افراد 2 اور ایک پنجابی فلم دادا پوتا شامل ہیں ریلیز ہوئیں۔ اس کے علاوہ ایک پرانی فلم بھائی لوگ جو 6 سال بعد فلمی حلقوں کی فرمائش پر نمائش کی گئی۔ یہ بات خوش آئند ہے کہ عید پر تمام پاکستانی فلموں نے اچھا بزنس کیا۔
سینئر اداکار سہیل احمد نے عید پر ریلیز ہونے والی فلموں پر تبصرہ کرتے ہوئے کہا کہ میں فلم پنجاب نہیں جائوں گی کی تعریف اس لئے نہیں کر رہا کہ میں نے اس فلم میں کام کیا ہے میں اس لئے کر رہا ہوں کہ یہ فلم واقعی ایک اچھی فلم ہے مجھے زیادہ خوشی اس بات کی ہے کہ اب پاکستان میں اچھی فلمیں بننا شروع ہو گئی ہیں۔ ہدایت کار ندیم بیگ نے بہت اچھے سکرپٹ کو بہت اچھے انداز میں شوٹ کیا ہے۔ ہر ایکٹر اپنے کردار میں فٹ نظر آتا ہے اور لوگوں نے جس طرح اس فلم کو ریسپانس دیا ہے وہ بھی قابل تعریف ہے امید ہے کہ لوگ آئندہ بھی اچھی فلم بنانے والوں کی حوصلہ افزائی کریں گے اور اس فلم کی کامیابی کے باعث آئندہ بھی اچھی فلم بنانے والوں کی حوصلہ افزائی ہوگی۔ میرے خیال میں یہ مووی کسی بھی انٹرنیشنل فلم سے کم نہیں۔ مہوش حیات نے بہت اچھا کام کیا ہے۔ ہمایوں سعید نے بھی کمال کی اداکاری کی ہے۔ نوید شہزاد صاحبہ تو بلا شبہ فن اداکاری میں ایک استاد کی حیثیت رکھتی ہیں حتیٰ کہ مہمان اداکار وسیم عباس اور بہروز سبزواری بھی اپنے کرداروں میں بہت فٹ لگے ہیں۔ بہروز سبزواری کی اہلیہ نے تو پہلی دفعہ اداکاری کی ہے اس حوالے سے وہ سب سے اچھی لگ رہی ہیں۔ احمد بٹ نے بھی بہترین اداکاری کی ہے۔ اس فلم کا سکرپٹ اور ڈائریکٹر بہت مضبوط ہیں۔فلم کے رائٹر خلیل الرحمان قمر اور ہدایت کار ندیم بیگ مبارکباد کے مستحق ہیں۔
فلم پنجاب نہیں جائوں گی کے ہیرو ہمایوں سعید نے کہا ہے کہ اپنی فلم پنجاب نہیں جائوں گی کی کامیابی پر بہت خوش ہوں میں نے گزشتہ رات کراچی کے کیپری سنیما میں فلم دیکھی میں نے اتنا رش کسی سنیما پر پہلے کبھی نہیں دیکھا۔ میں نے سنیما کے اندر لوگوں کو اتنا پر جوش بھی پہلے کبھی نہیں دیکھا۔ جب کوئی سنجیدہ سین آتا تو لوگ روتے تھے اور جب مزاحیہ سین آتا تو قہقہوں کی آوازیں گونجتی تھیں میں اس حوصلہ افزائی پر پاکستان کے عوام کا شکر گزار ہوں۔
جاوید شیخ نے کہا کہ اس عید پر میری فلم نا معلوم افراد 2 ریلیز ہوئی ہے جو لوگوں نے بہت پسند کی۔ مجھے خوشی اس بات کی ہے کہ عید پر دونوں فلمیں ہی لوگوں نے پسند کی ہیں۔
اداکارہ مہوش حیات نے کہا کہ یہ عید میرے لئے بہت اہم ہے کیونکہ اس عید پر ریلیز ہونے والی فلم پنجاب نہیں جائوں گی نے ریکارڈ بزنس کیا ہے جس پر میں اپنے پرستاروں کا شکریہ ادا کرتی ہوں۔
اداکارہ عروہ حسین نے کہا کہ اس عید قربان پر میری دو فلمیں پنجاب نہیں جائوں گی اور نا معلوم افراد 2 ریلیز ہوئی ہیں دونوں فلمیں ہی ہٹ ہوئی ہیں جس پر بہت خوش ہوں اور پاکستانی عوام کا شکریہ ادا کرتی ہوں۔