ریاستی مظالم پر میانمارحکومت کو دہشتگرد ملک قرار دیا جائے:ساجدمیر

05 ستمبر 2017

لاہور (خصوصی نامہ نگار) امیر مرکزی جمعیت اہل حدیث سینیٹر پروفیسر ساجد میرنے اقوام متحدہ سے مطالبہ کیا ہے کہ ریاستی مظالم پر میانمار حکومت کو دہشت گرد ملک قرار دیا جائے۔ روہنگیا مسلمانوں کو تحفظ فراہم کرنا امت مسلمہ کی اجتماعی ذمہ داری ہے ۔یونگون شہر میں مساجد اور مدارس بند کردیے گئے ہیں۔ یہ مذہبی شدت پسندی کی انتہا ہے۔بدھ مت کے پیروکار اپنے مذہب کی تعلیمات کی بھی نفی کررہے ہیں۔ ا ن کا کہنا تھا کہ ایسے مظالم کسی مسلمان ریاست کے ہاتھوں کسی اقلیت پر ہوتے تو اب تک وہاں ڈرون حملوں کی بارش ہوچکی ہوتی۔ کتوں اور بلیوں کی جانیں بچانے والے ،مہذب ممالک کو میانمار میں انسانی المیہ کیوں دکھائی نہیں دے رہا۔ مسلمانوں کا خون اتنا ارزاں نہیں کہ مسلم ممالک خاموش ہو کر بیٹھ جائیں۔ بنگلادیش کو مہاجرین کے لیے اپنی سرحدوں کے دروازے کھول دینے چاہیے۔