حب کینال میں شگاف سے کراچی کو پانی کی فراہمی معطل

05 ستمبر 2017

کراچی (اسٹاف رپورٹر)عید کے تینوں دن واٹربورڈ کے عملے نے شہریوں کوفراہمی ونکاسی آب کی سہولیات کی فراہمی کیلئے مختلف شفٹوں میں فرائض منصبی ادا کیئے، شہر کے مختلف علاقوں میں بارش کے بعد پیدا ہونے والی سیوریج کی صورتحال کوبہتر بنانے کیلئے عملی اقدامات کئے گئے ،ایم ڈی واٹربورڈ سید ہاشم رضا زیدی بھی اعلیٰ حکام کے ساتھ شہر کے مختلف اضلاع کا دورہ کرتے رہے۔واپڈا کے زیر انتظام حب کینال میں پڑنے والے شگاف کے سبب اور واپڈا حکام کے عدم تعاون و عدم دلچسپی کے باعث کراچی کو حب ڈیم سے یومیہ 100ملین پانی کی فراہمی معطل رہی، ایم ڈی واٹربورڈ کے فوری نوٹس لینے کے بعد واٹربورڈ نے حب کینال کے علاقہ میں پڑنے والے شگاف کی مرمت کا کام بلاکسی وقفہ کے جاری رکھا ، آج منگل کو حب ڈیم سے پانی کی فراہمی معمول کے مطابق شروع کردی جائے گی ،تفصیلات کے مطابق ایم ڈی واٹربورڈ نے تین روز قبل کراچی کو حب ڈیم سے پانی فراہم کرنے والی واپڈا کے زیرانتظام حب کینال میں شگاف پڑنے کا سخت نوٹس لیا ،شگاف کے باعث واپڈاحکام کی جانب سے حب کینال سے کراچی کو پانی کی فراہمی بند کئے جانے اور پڑنے والے شگاف کو پرکرنے کیلئے عدم دلچسپی پر ایم ڈی واٹربورڈ نے کراچی کے شہریوں خصوصاً ضلع غربی کو پانی کے بحران سے بچانے کیلئے واٹربورڈ کے سپرنٹنڈنگ انجینئر بلک عبدالرحمن شیخ کو ہدایت کی کہ وہ مزید کوئی وقت ضائع کیئے بغیر واپڈا کی زیرانتظام حب  کینال کی مرمت شروع کردیں ،شگاف کو فوری پر کیا جائے تاکہ کراچی کو جلد از جلد معمول کے مطابق پانی کی فراہمی شروع کی جاسکے ،دو دن کی مسلسل کوششوں کے بعد واٹربورڈ کے عملے نے سپرنٹنڈنگ انجینئر بلک کی زیر نگرانی کینال میں پڑنے والے شگاف کو تقریباً پر کردیا ہے پیر کی شام تک مزکورہ کینال میں پانی آہستہ آہستہ چھوڑا جارہا ہے ،منگل کی صبح تک شگاف پر کرنے کا کام مکمل ہونے کے بعد شہر کو پانی کی فراہمی معمول کے مطابق شروع کردی جائے گی۔