A PHP Error was encountered

Severity: Notice

Message: Undefined index: category_data

Filename: frontend_ver3/Templating_engine.php

Line Number: 35

صدر سے وزیراعظم کی ملاقات‘ سوئس حکام کو خط نہ لکھنے کے عزم کا اعادہ

05 فروری 2012
اسلام آباد (نمائندہ خصوصی + وقت نیوز) وزیراعظم سید یوسف رضا گیلانی نے صدر آصف علی زرداری سے ملاقات کی۔ وزیراعظم نے صدر کو اپنے حالیہ دورہ سوئٹزر لینڈ کی تفصیلات سے آگاہ کیا۔ ملاقات میں وزیراعظم کے پیر سے شروع ہونے والے قطر کے اہم دورے کے بارے میں صلاح مشورہ کیا گیا۔ وزیراعظم کا دورہ قطر نیٹو سپلائز، پاکستان افغانستان تعلقات کے حوالے سے بہت اہمیت کا حامل ہے۔ ذرائع کے مطابق ملاقات 13 فروری کو وزیراعظم کی توہین عدالت کے سلسلہ میں سپریم کورٹ میں پیشی کے معاملہ پر بھی بات چیت ہوئی۔ وزیراعظم دورہ مختصر کر کے اسلام آباد پہنچے تھے۔ ملاقات میں اس عزم کا اعادہ کیا گیا کہ حکومت سوئس حکام کو خط نہیں لکھے گی کیونکہ ایسا کرنا شہید بے نظیر بھٹو کی قبر کے ٹرائل کے مترادف ہو گا‘ پارلیمنٹ بالادست ہے اسے قائم رکھا جائے گا۔ عدلیہ کا احترام کرتے ہیں۔ ملاقات میں ملکی موجودہ سیاسی صورتحال‘ 20 ویں آئینی ترمیم سپریم کورٹ کے این آر او عملدرآمد کیس کے حوالے سے فیصلے، سوئس حکام کو خط لکھنے سمیت مختلف امور پر تبادلہ خیال کیا گیا۔ ذرائع کے مطابق صدر اور وزیراعظم نے کہا کہ حکومت عدلیہ کا احترام کرتی ہے، وزیر اعظم سید یوسف رضا گیلانی عدلیہ کے احترام کے طور پر ہی عدالت میں پیش ہوئے اور اب 13 فروری کو بھی وہ عدالت میں پیش ہوں گے۔ ذرائع کے مطابق آج پیپلز پارٹی کی کور کمیٹی کے ہونے والے اجلاس میں صدر‘ وزیراعظم ملاقات میں سوئس حکام کو خط لکھنے کے حوالے سے عزم کی توثیق کرائی جائے گی۔ ذرائع کے مطابق وزیر اعظم نے 20 ویں آئینی ترمیم میں اپوزیشن اور سینٹ الیکشن کے حوالے سے حلیف جماعتوں کے مطالبات بارے صدر کوآگاہ کیا۔ پیپلز پارٹی کی حلیف جماعتوں مسلم لیگ (ق) اور اے این پی کی جانب سے سینٹ کی نشستوں میں زیادہ نشستیں دینے کا مطالبہ کیا جا رہا ہے 20 ویں آئینی ترمیم کے حوالے سے مسلم لیگ (ن) نے 4 مطالبات پیش کئے تھے۔ وزیر اعظم نے صدر آصف علی زرداری کو ان مطالبات سے آگاہ کیا اور یہ فیصلہ کیا گیا کہ اس معاملے پر (آج) پیپلز پارٹی کی کور کمیٹی کے ہونے والے اجلاس میں بحث کی جائے گی۔ صدر آصف علی زرداری نے پارٹی کی کورکمیٹی اجلاس آج دوپہر کو ایوان صدرمیں طلب کیا ہے جس میں ملکی سیاسی صورتحال، سینٹ الیکشن اور پارٹی امور پر مشاورت کی جائے گی۔ ذرائع نے بتایا کہ اجلاس میں سپریم کورٹ میں زیر سماعت این آر او کیس، وزیراعظم کے خلاف توہین عدالت کے نوٹس اور میمو کیس کے حوالے سے بھی جائزہ لیا جائے گا اور اس حوالے سے آئندہ کا لائحہ عمل مرتب کیا جائے گا۔