محمد عامر کو دوبارہ قومی ٹیم میں دیکھنا چاہتا ہوں: ذکاءاشرف

05 فروری 2012
دبئی (آئی این پی) پاکستان کرکٹ بورڈ کے چیئرمین ذ کاء اشرف نے کہا ہے کہ اگر محمد عامر دوبارہ انٹرنیشنل کرکٹ کھیلنے کےلئے اہل قرار پاتے ہیں تو وہ انہیں پاکستانی کرکٹ ٹیم میں دیکھنا چاہیں گے۔ دبئی کرکٹ سٹیڈیم میں صحافیوں سے بات چیت کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ آئی سی سی کے اینٹی کرپشن ٹریبونل کی جانب سے محمد عامر کی پانچ سالہ پابندی کے خلاف کھیلوں کی عالمی ثالثی عدالت میں اپیل کے فیصلے سے بھی صورت حال واضح ہوجائے گی۔ انہوں نے کہا کہ پاکستان کرکٹ بورڈ محمد عامر کی باقاعدہ ذہنی تربیت کرے گا اورمالی مدد بھی کرنے کو تیار ہیں۔پاکستان کرکٹ بورڈ کے چیئر مین کے مطابق محمد عامر ایک نوجوان باصلاحیت کرکٹر ہیں، یقیناً ان سے بہت بڑی غلطی ہوئی جس کی سزا وہ بھگت رہے ہیں لیکن وہ چاہیں گے کہ مستقبل میں محمد عامر کا ٹیلنٹ مثبت انداز میں پاکستان کے کام آئے۔ذکاءاشرف نے کہا کہ آئی سی سی ٹریبونل کی جانب سے پانچ سالہ پابندی کے دوران محمد عامر کسی بھی سطح پر کرکٹ نہیں کھیل سکتے لیکن اس عرصے میں ان کی ذہنی طور پر بحالی پر کوئی پابندی نہیں ہے۔انہوں نے کہا کہ ان کی خواہش ہے کہ محمد عامر کی مالی مدد کے طور پر ان سے دوسرے کرکٹرز کو لیکچرز بھی دلوائے جا سکتے ہیں۔