الطاف حسین کے ناقابل ضمانت وارنٹ گرفتاری جاری

05 اگست 2015 (18:37)

کراچی کے سول لائن تھانے کےانسپکٹر محمد نعیم کی جانب سے انسداد دہشت گردی عدالت میں متحدہ کے قائد الطاف حسین کے خلاف چالان پیش کیا گیا تھا۔ چالان میں مؤقف اختیار کیا گیا کہ گیارہ مارچ دو ہزار پندرہ کو ایک نجی ٹی وی کو انٹرویو دیتے ہوئے الطاف حسین نے رینجرز افسران کو جان سے مارنے کی دھمکیاں دیں تھیں۔ سولہ مارچ کو رینجرز کے کرنل طاہرمحمود کی مدعیت میں الطاف حسین کے خلاف جان سے مارنے کی دھمکیاں دینے کے الزام میں مقدمہ درج کیا گیا۔ چالان میں مدعی کرنل طاہر محمود ، میجر سبطین ، رینجرز کے ڈی ایس آر ضیاءفاروق ، ڈی ایس آر اشرف شاہ ، نجی ٹی وی کے اینکر سمیت نوگواہان کے نام شامل کئے گئے ہیں۔ عدالت نے چالان سماعت کے لیے منظور کیا تھا جس کے بعد بدھ کے روز عدالت نے الظاف حسین کے خلاف بیس اگست تک ناقابل ضمانت وارنٹ گرفتاری جاری کرتے ہوئے انہں عدالت میں پیش کرنے کا حکم دیا ہے۔