پارٹی گراف گر رہا ہے، کنٹونمنٹ بورڈ الیکشن میں ٹکٹوں کے پیسے لئے گئے: جسٹس وجیہہ

05 اگست 2015

اسلام آباد+ کراچی (آن لائن+ نوائے وقت رپورٹ) تحریک انصاف کے رہنما جسٹس ریٹائرڈ وجہیہ الدین احمد نے کہا ہے کہ اس وقت چار افراد کا تحریک انصاف میں گروپ ہے جو عمران خان کے اردگرد گھومتا رہتا ہے جس سے پارٹی کاگراف گررہا ہے۔ جاوید ہاشمی کو پارٹی سے نکالنا بہت بڑی غلطی تھی، انکے تحفظات کو دور کرنا چاہئے تھا، میرے پارٹی سے نکلنے کا سوال ہی پیدا نہیں ہوتا، اگر مجھے کوئی پارٹی سے نکال دے تو وہ اور بات ہے، پی ٹی آئی میں نئے آنیوالے لوگوں کی صفائی ہونی چاہئے۔ خیبر پی کے بلدیاتی انتخابات کے بعد لگ رہا ہے کہ پی ٹی آئی کا گراف نہیں گرا لیکن کنٹونمنٹ انتخابات کا رزلٹ خوفناک ہے، پارٹی کے الیکشن ٹربیونل کے فیصلوں پر من وعن عمل ہو رہا ہے۔ نجی ٹی وی سے گفتگو میں انہوں نے کہا کہ ہمارے پارٹی کمیشن نے ان عناصر کیخلاف فیصلے دیئے ہیں جن کیخلاف شواہد آرہے تھے۔ جسٹس ریٹائرڈ وجہیہ الدین نے کہا کہ چیف جسٹس افتخار چوہدری پر بولنے کے بعد جس طرح سپریم کورٹ کا توہین عدالت پی ٹی آئی پر دائر ہوا تھا اسکا کیس اگر حامد خان صحیح طریقے سے نہ لڑتے تو آج آرٹیکل 63 کے تحت سپریم کورٹ انکو نااہل قراردیدیتا، نظریاتی لوگ بالکل پارٹی نہ چھوڑیں۔ کنٹونمنٹ بورڈ الیکشن میں پارٹی ٹکٹوں کیلئے پیسے لئے گئے پیسے لینے والے اب بھی تحریک انصاف میں عہدیدار ہیں۔ نجی ٹی وی سے گفتگو میں انہوں نے کہا کہ علیم خان کا بال بھی بیکا نہیں ہوا۔ پارٹی کے حوالے سے میڈیا میں بات کرتے عمران خان کی پابندی کے سوال پر جسٹس (ر) وجیہہ الدین نے کہا کہ میں جو بات کرتا ہوں وہ کرتا رہونگا۔