آر پی اوز کانفرنس، پنجاب میں دہشتگردوں اور انکے معاونین کیخلاف بھرپور آپریشن کا فیصلہ

05 اگست 2015

لاہور (نامہ نگار) پنجاب میں دہشت گردوں اور انکے معاونین کے خلاف بھر پور آپر یشن کر نے کا فیصلہ بنکوں کے باہر سکیورٹی کر نیوالے پر ائیویٹ گارڈزکو بھی3سے 6 دنوں کی ٹر ینگ دی جائیگی۔ تمام عبادت گاہوں کی انتظامیہ کو دیواریں اونچی کر نے اور خار دار تاریں لگانے کی سختی سے ہدایت کر دی گئی جبکہ آئی جی پنجاب نے تمام آرپی اوز کو تر قیوں کے زیر التواء کیس2ماہ میں نمٹانے کی یقین دہانی کروادی۔ منگل کے روز صوبہ بھر کے آرپی اوزکی ویڈیو کانفر نس آئی جی پنجاب مشتاق سکھیرا کی صدارت میں ہوئی جس میں صوبے میں امن وامان کی صورتحال ‘دہشت گردوں کے خلاف کارروائی اور امن وامان یقینی بنانے سمیت دیگر امور کے حوالے سے مشاورت اور اہم فیصلے کیے گئے آئی جی پنجاب نے تمام آرپی اوز کو پنجاب میں سیاہ شیشوں والی گاڑیوں کے خلاف بھی روزانہ کی بنیادوں پر کارروائی کر نے کی ہدایت کی گئی اور یہ بھی فیصلہ کیا گیا کہ پنجاب میں کالعدم تنظیموں سمیت دہشت گر دی کی کارروائیوں میں ملوث عناصر کیخلاف آپر یشن کے عمل کو مزید تیز کیا جائے گا جبکہ دہشت گردوں کو مختلف ذرائع سے سپورٹ کر نیوالے دہشت گردوں کے معاونین کی بھی فہرستیں بنائی جائیں اور انکے خلاف بھر پور آپریشن کیا جائے گا۔ اس موقعہ پر دہشت گردی کے خطرات کے پیش نظر لاہور سمیت پورے پنجاب میں سکیورٹی کو بھی مزید ہائی الرٹ رکھنے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔ آئی پنجاب مشتاق سکھیرا نے اپنے خطاب میں کہا کہ صوبے میں کسی بھی صورت دہشت گردوں اور امن دشمنوں کو برداشت نہیں کیا جا ئیگا اور امن وامان کو یقینی بنانے کیلئے تمام وسائل کو استعمال کیا جائیگا۔