ایف بی آر کا وقف مسترد، ہوائی جہازوں کے ٹکٹ، اشیا کی ترسیل پر سیلز ٹیکس پنجاب حکومت وصول کریگی

05 اگست 2015

لاہور (معین اظہر سے) پنجاب حکومت نے بجٹ میں ہوائی جہاز کی ٹکٹوں ، چارٹر فلائیٹ، ہوائی جہاز اور ریل کے ذریعے اشیا کی ترسیل پر لگائے سیلز ٹیکس کو ایف بی آر نے غیر قانونی قرار دیتے ہوئے وصولی سے روکدیا ہے لیکن وزیر اعلیٰ پنجاب نے ایف بی آر کے مؤقف کو مسترد کرتے ہوئے چیئرمین پنجاب ریونیو اتھارٹی کو ٹیکس کی وصولی فوری طور پر شروع کرنے کی ہدایات جاری کر دی ہیں اور وزیر اعلیٰ کی ہدایت پر چیف سیکرٹری پنجاب نے چیئرمین ایف بی آر کو خط لکھ دیا ہے کہ وفاقی حکومت ہوائی ٹکٹوں پر وفاقی ایکسائز ڈیوٹی کی وصولی بند کر دے ۔ تفصیلات کے مطابق حکومت پنجاب نے فنانس بل 2015ء میں ہوائی جہاز کی ٹکٹوں پر سیلز ٹیکس عائد کیا تھا اور اس سیلز ٹیکس کی وصولی کا اختیار پنجاب ریونیو اتھارٹی کو دیا تھا۔ اسی طرح کا ٹیکس ایف بی آر بھی جہازوں کی ٹکٹوں پر وصول کر رہی ہے جس پر ریونیو اتھارٹی کی طرف سے اس ٹیکس کی وصولی کیلئے جس وقت متعلقہ جگہوں پر لیٹر لکھے گئے تو ایف بی آر کی طرف سے چیئرمین پنجاب ریونیو اتھارٹی کو کہا گیا وفاقی حکومت پہلے ہی وفاقی ایکسائز ڈیوٹی ہوائی جہازوں کی ٹکٹوں پر وصول کر رہی ہے اسی طرح کا دوسرا ٹیکس صوبہ کیسے وصول کر سکتا ہے۔ اس پر چیئرمین پنجاب ریونیو اتھارٹی نے وزیر اعلیٰ پنجاب کو ایف بی آر کے احکامات کے بارے میں آگاہ کیا جس پر وزیراعلی پنجاب نے سیکرٹری قانون اور ایڈووکیٹ جنرل پنجاب کو اس بارے میں اپنی رائے دینے کی ہدایات دیں۔ محکمہ قانون پنجاب نے اپنی رائے میں کہا کہ 18ویں آئینی ترمیم اور 7ویں این ایف سی ایوارڈ کے تحت حکومت پنجاب کو اس ٹیکس کو عائد کرنے کا اختیار ہے۔ اس پر وزیر اعلی پنجاب نے چیف سیکرٹری ، سیکرٹری خزانہ اور چیئرپرسن ریونیو اتھارٹی پر مشتمل کمیٹی قائم کی جو ایف بی آر سے اس مسئلہ کو فوری طور پر اٹھائے گی چیئرپرسن ریونیو اتھارٹی نے محکمہ خزانہ کو جو کیس بھجوایا ہے اس میں انہوں نے این ایف سی ایوارڈ اور 18ویں آئینی ترمیم کی شقوں کے حوالے دئیے ہیں کہ اس کے تحت پنجاب حکومت ہوائی جہاز کی ٹکٹوں ، چارٹر فلائیٹ، بائی ائر یا ریل کے ذریعے اشیاء کی نقل و حرکت پر سیلز ٹیکس عائد کر سکتی ہے۔ چیف سیکرٹری پنجاب نے چیئرمین ایف بی آر کو لیٹر لکھا ہے کہ وہ ایف بی آر کو وفاقی ایکسائز ڈیوٹی جو جہازوں کی ٹکٹوں پر عائد ہے اس کو واپس لے۔ ذرائع کے مطابق ایف بی آر اور حکومت پنجاب کے درمیان تنازع کی وجہ سے لوگ ڈبل ٹیکس دینے پر مجبور ہوں گے، اس ماہ حج آپریشن شروع ہو جائیگا کیا حاجی ایک ہی ٹکٹ پر ایک ہی طرح کے دو ٹیکس دیں گے۔