25 ارکان کی معطلی کیخلاف کانگریس کا یوم سیاہ، بھارتی پارلیمنٹ کے سامنے مظاہرہ

05 اگست 2015

نئی دہلی (نیوز ڈیسک) بھارت کی سب سے بڑی اپوزیشن جماعت انڈین نیشنل کانگریس نے ایوان زیریں ’’لوک سبھا‘‘ سے اپنے 25 ارکان کی پانچ روز کیلئے معطلی کیخلاف منگل کے روم یوم سیاہ منایا اور پارٹی سربراہ سونیا گاندھی اور نائب صدر راہول گاندھی کی قیادت میں پارلیمنٹ کے سامنے مظاہرہ کیا۔ اس موقع پر کانگریس کی اتحادی جماعتوں راشٹریہ جنتادل، سماج وادی پارٹی اور نیشنل کانگریس کے ارکان اور رہنمائوں نے بھی شرکت کی اور لوک سبھا کے اجلاس کا معطل کانگریس ارکان سے اظہار یکجہتی کیلئے بائیکاٹ کیا۔ مظاہرہ کرنے والے رہنمائوں نے مودی سرکار کیخلاف شدید نعرے بازی کرتے ہوئے للت مودی سکینڈل کوئین وزیر خارجہ شسما سوراج اور وزیراعلیٰ راجستھان وسوندرا راجے کو برطرف کرنے کا مطالبہ کیا۔ راہول گاندھی نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ ہمارے ارکان نہیں بلکہ بی جے پی کے سکینڈل اور کرپشن زدہ رہنمائوں کو پارلیمنٹ سے اٹھا کر باہر پھینکنا چاہئے۔ مظاہرے سے سابق وزیراعظم منموہن سنگھ اور دیگر جماعتوں کے رہنمائوں نے بھی خطاب کیا۔

EXIT کی تلاش

خدا کو جان دینی ہے۔ جھوٹ لکھنے سے خوف آتا ہے۔ برملا یہ اعتراف کرنے میں لہٰذا ...