ایل ڈی اے سٹی کیلئے فنڈز مختص کرنے کیخلاف درخواست پر دوبارہ نوٹس

05 اگست 2015

لاہور (وقائع نگار خصوصی) ہائیکورٹ نے پنجاب کے بجٹ میں ایل ڈی سٹی کے ترقیاتی منصوبوں کے لیے رقم مختص کرنے اور ایل ڈی اے سٹی کے خلاف دائر درخواست پر حکومت پنجاب اور ایڈوکیٹ جنرل کو دوبارہ نوٹس جاری کرتے ہوئے ستمبر کے پہلے ہفتے جواب طلب کر لیا۔ درخواست گزار کے وکیل نے موقف اختیار کیاکہ ایل ڈی اے کے گیارہ ارب روپے کے بجٹ میں سے 4ارب روپے براہ راست ایل ڈی اے سٹی کے ترقیاتی منصوبوں کے لئے مختص کئے گئے۔ ستانوے فیصد شہریوں کا بجٹ سات فیصد شہریوں کے لئے مختص کیا جانا آئین پاکستان کے بنیادی حقوق سے متصاد ہے۔انہوں نے دلائل دیتے ہوئے کہا کہ لاہور کے علاقوں سمن آباد، گلشن راوی، اندرون شہر، شادباغ ، ملتان روڈ ، بند روڈ اور جی ٹی روڈ کی سڑکیں ٹوٹیں ہوئی ہیں ان کے لیے کوئی فلائی اوور نہیں بنایاگیا لہذا عدالت ایل ڈی اے سٹی پراجیکٹ کو مختص کیے جانے والے بجٹ پر عملدرآمد روکے اور ہدایات دے کہ یہ تمام بجٹ لاہور کے گنجان آباد اور پسماندہ علاقوں میں لگایا جائے۔