پاکستان سمیت دنیابھرمیں آج کینسر سے بچاؤ کاعالمی دن منایاجارہاہے۔

04 فروری 2013 (14:19)
پاکستان سمیت دنیابھرمیں آج کینسر سے بچاؤ کاعالمی دن منایاجارہاہے۔

پاکستان سمیت دنیا بھر میں آج کینسرکاعالمی دن منایاجارہاہے۔ اس دن کومنانے کامقصد سرطان سے آگاہی اوراس سے بچائوکے حوالے سے شعوربیدارکرناہے۔ ماہرین کے مطابق دنیا بھرمیں سالانہ ایک کروڑ 27لاکھ سے زیادہ افراد کینسرکاشکار بنتے ہیں۔۔۔ اورہرسال 81 لاکھ سے زیادہ افراد اس موذی مرض کے ہاتھوں زندگی کی بازی ہار جاتے ہیں۔ موجو دہ صورتحال کوکنٹرول نہ کیا گیا تو 2030ء میں کینسر میں سالانہ مبتلا ہو نے والے افراد کی تعداد 2 کروڑ 60 لاکھ اور ہلاک ہو نے والوں کی تعداد ڈیڑھ کروڑسے تجاوز کر نے کااندیشہ ہے۔۔۔ دنیامیں کینسر کی 17 فیصد اموات پھیپھڑوں، 11 فیصد پیٹ جبکہ 7 فیصد اموات چھاتی کے کینسرکی وجہ سے ہوتی ہیں۔ طبی ماہرین کے مطابق پاکستانی خواتین میں ہر سال لگ بھگ 90 ہزارسے زیادہ کینسرکے کیس رپورٹ ہوتے ہیں۔ خواتین میں بریسٹ کینسر جبکہ مردوں میں پھیپھڑوں اور پراسٹیٹ کے علاوہ منہ کے سرطان میں تشویشناک حد تک اضافہ دیکھا گیا ہے۔ اگر سرطان کی بر وقت تشخیص ہوجائےتو اس کا علاج ممکن ہے، مگرملک میں سرطان کی ابتدائی تشخیص کی شرح بہت کم ہے،جس کی وجہ عوامی آگہی کافقدان ہے۔ سرطان کی ابتدائی علامات میں مستقل تھکن، وزن میں اچانک کمی، درد، بخار، ہاضمے کی مسلسل خرابی اورکھانسی وغیرہ شامل ہیں۔

کینسر کاعالمی دن

ہر سال کی طرح اس سال بھی 4فروری کو World Cancer Day یعنیــــ’’ کینسر/سرطان ...