حکومت عوام کو ریلیف دینے میں ناکام رہی: پروفیسر عبدالستار حامد

04 فروری 2013

لاہور (خصوصی نامہ نگار) مرکزی جمعیت اہلحدیث پنجاب کی کابینہ نے 5 فروری کو یوم یکجہتی کشمیر انتہائی جوش و خروش سے منانے کا فیصلہ کیا جبکہ عاصمہ جہانگیر کا نام بطور نگران وزیراعظم مسترد کرتے ہوئے اس کے نگران وزیراعظم بنائے جانے کوشش پر شدید احتجاج کی دھمکی دی گئی اس سلسلہ میں اجلاس میں صوبائی امیرپروفیسر حافظ عبدالستار حامد کی زیر صدارت ہوا۔ اجلاس میں پنجاب بھر سے علماءو اراکین کابینہ نے شرکت کی مرکزی جمعیت اہلحدیث پنجاب کے ناظم میاں محمود عباس نے کہا پیپلز پارٹی کی حکومت زندگی کے کسی بھی شعبہ میں عوام کو ریلیف دینے میں ناکام ہو گئی۔ پروفیسر حافظ عبدالستار حامد نے کہا کہ عاصمہ جہانگیر کو نگران وزیراعظم بنایا گیا تو یہ ایک المیہ سے کم نہیں ہوگا۔ دریں اثناءمرکزی جمعیت اہلحدیث پنجاب کی کابینہ نے مختلف قرار دادیں بھی پاس کی ہیں جن میں مرکزی جمعیت اہلحدیث کی قیادت علامہ پروفیسر ساجد میر اور ناظم اعلیٰ ڈاکٹر حافظ عبدالکریم کی قیادت پر بھر پور اعتماد کا اظہار کرتے ہوئے ان کے تمام فیصلوں پر عملدرآمد کی یقین دہانی کروائی۔ اجلاس میں مولانا محمد نعیم بٹ، مولانا مبشر مدنی، مولانا عبدالحمید عامر، حافظ عبدالرزاق، مولانا محمد حنیف بھٹی، سید عتیق الرحمن شاہ، مولانا بشیر احمد بشیر، مولانا بہادر علی سیف، حافظ عبدالغفورطاہر، مولانا عبدالغفار حسن اور دیگر نے شرکت کی۔