ہرگزرتا دِن ضائع ہو رہا ہے،فلسطین مذاکر ت کرے، اسرائیلی وزیر اعظم

04 فروری 2013


مقبوضہ بیت المقدس(این این آئی)اسرائیل کے صدر شمعون پیریز نے نامزد وزیر اعظم بینجمن نیتن یاہو کو نئی حکومت بنانے کی دعوت دیدی ان کے پاس اتحاد کی تشکیل کے لیے اٹھائیس دِن کا وقت ہے۔ میڈیارپورٹس کے مطابق اسرائیلی صدر شمعون پیریز نے نیتن یاہو کو نو منتخب ارکانِ پارلیمنٹ کی جانب سے منظوری ملنے کے بعد حکومت بنانے کی باقاعدہ درخواست گزشتہ ہفتے دی صدر کی جانب سے حکومت بنانے کی دعوت ملنے کے بعد بات چیت میں نیتن یاہو نے کہا کہ ایران کو جوہری ہتھیاروں کے حصول سے روکنا نئی حکومت کی اولین ترجیح ہو گی۔نیتن یاہو نے امید ظاہر کی کہ وہ وسیع طور پر ممکنہ قومی اتحادی حکومت کو تشکیل دیں لے گے۔انہوں نے فلسطینی صدر محمود عباس پر بھی زور دیا کہ وہ مذاکرات شروع کریں۔ نیتن یاہو نے کہا کہ مذاکرات کے بغیر گزرتا ہوا ہر دِن ضائع ہو رہا ہے۔ اندرون ملک درپیش چیلنجز کے حوالے سے انہوں نے رہائش کے اخراجات کم کرنے اور کٹر یہودیوں کے لیے لازمی ملٹری سروس کے لیے مکمل استثنی کے خاتمے کی بات کی۔ ان کا کہنا تھاکہ ہمیں اختلافات نظرانداز کرنے ہوں گے تاکہ ہم آپس میں اور اپنے پڑوسیوں کے ساتھ امن سے رہ سکیں۔ادھر اسرائیلی صدر شمعون پیریز کا کہنا تھا کہ انہوں نے پارلیمنٹ میں اکثریت رکھنے والی جماعتوں کی جانب سے نیتن یاہو کو وزیر اعظم نامزد کیے جانے پر انہیں حکومت سازی کا کام سونپا ہے۔