افراط زر کی شرح میں ماہانہ 1.7 فیصد اضافہ

04 فروری 2013

کراچی (این این آئی) پاکستان میں گزشتہ ماہ صارف قیمتوں کے اشاریئے (سی پی آئی) کی بنیاد پر افراط زر کی شرح 8.1 فیصد تک پہنچ گئی جو دسمبر میں 7.9 فیصد تھی اور گزشتہ سال جنوری میں 10.1 فیصد تھی، ماہانہ بنیادوں پر افراط زر کی شرح میں 1.7 فیصد اضافہ ہوا جو جنوری میں 0.2 فیصد اور جنوری 2012 ءمیں 1.5 فیصد اضافہ ہوا تھا، جنوری 2013 ءکے دوران افراط زر کی شرح میں اضافے کی بڑی وجہ خوراک و مشروبات، کپڑوں و جوتوں کے دام، ہاﺅسنگ، بجلی، گیس، پانی و ایندھن چارجز، گھریلو آرائشی و مرمتی آلات، ٹرانسپورٹ، صحت و تعلیم کے اخراجات میں اضافہ ہے۔ گزشتہ ماہ خوراک و مشروبات کی قیمتیں سال بہ سال 7 .62 فیصد بڑھیں اور انفلیشن میں اضافے میں ان کا حصہ 2.69 فیصد رہا، اس کے بعد افراط زر پر سب سے زیادہ 1.16 فیصد اثر کپڑے اور جوتوں کی قیمتیں بڑھنے کا ہوا۔ گزشتہ ماہ کلوتھنگ اینڈ فٹ ویئر پرائسز سالانہ بنیادوں پر 15.27 فیصد بڑھی، جنوری 2013 ءمیں ہاﺅسنگ، بجلی، گیس، پانی و ایندھن چارجز میں مجموعی طور پر 3.59 فیصد اضافہ ہوا، تاہم ان کا اثر افراط زر پر 1.06 فیصد آیا۔ اسی طرح گھریلو آرائشی و مرمتی آلات 11.15 فیصد مہنگے ہوئے اور اس کا افراط زر میں حصہ 0.47 فیصد رہا ۔