ترقیاں رک جانے کے باعث سینکڑوں بیوروکریٹس میں مایوسی کی لہر

03 ستمبر 2010
اسلام آباد (افضل باجوہ / دی نیشن رپورٹ) حکومت نے ترقیوں پر غیر اعلانیہ پابندی عائد کر دی ہے جس سے سینکڑوں سینئر بیوروکریٹس مےں مایوسی کی لہر دوڑ گئی ہے، تمام پہلوﺅں سے کوالیفائی کرنے کے باوجود یہ تمام بیوروکریٹس ترقی کے احکامات نہ ہونے سے ریٹائرمنٹ کے بعد اپنے مستقبل کے حوالے سے مایوسی کا شکار ہوئے ہےں۔ متعدد ملاقاتوں مےں گفتگو کے دوران سینئر اور مڈ کیریئر بیوروکریٹس نے بتایا کہ اس صورتحال مےں وفاقی بیوروکریسی کا مورال گرا ہے، ان کی معمول کے مطابق ترقیوں مےں بڑی رکاوٹ حکومت کی جانب سے اس پیمانے پر سپریم کورٹ کے حکم کے مطابق قواعد مرتب کرنے مےں سست روی ہے۔ واضح رہے کہ سپریم کورٹ نے 54 بیوروکریٹس کی گریڈ 21 سے 22 مےں ترقی روک دی تھی، اس وقت گریڈ 19اور 20کے سینکڑوں بیوروکریٹس ترقی کے منتظر ہےں۔