کور کمانڈرز کانفرنس میں داخلی اور بیرونی سلامتی کی صورتحال پر غور

03 مئی 2014

اسلام آباد (سٹاف رپورٹر/ نوائے وقت رپورٹ) کور کمانڈرز کی کانفرنس جی ایچ کیو میں ہوئی جس کی آرمی چیف جنرل راحیل شریف نے صدارت کی۔ آئی ایس پی آر کے مختصر بیان میں بتایا گیا ہے کہ کور کمانڈروں کی یہ 172ویں کانفرنس تھی۔ شرکا نے پیشہ وارانہ امور کے علاوہ ملک کی داخلی اور بیرونی سلامتی کے امور پر غور کیا۔ کور کمانڈروں کی یہ کانفرنس ایسے وقت میں ہوئی ہے جب چند روز پہلے ایک میڈیا گروپ کی طرف سے فوج اور آئی ایس آئی کے خلاف غیرمعمولی الزامات عائد کئے گئے جس پر ملک بھر میں ردعمل سامنے آیا۔ اسی تناظر میں سول ملٹری تعلقات کے موضوع پر ایک نئی بحث شروع ہو گئی۔ مذکورہ الزامات عائد کئے جانے کے بعد آرمی چیف جنرل راحیل شریف نے آئی ایس آئی کے ہیڈ کوارٹرز کا دورہ بھی کیا تھا۔ ذرائع کے مطابق کور کمانڈرز نے فوج کی پیشہ وارانہ تیاریوں پر اطمینان کا اظہار کیا۔ آرمی چیف نے کور کمانڈرز کو امریکی سینٹ کام چیف کے ساتھ بات چیت پر اعتماد میں لیا۔ کانفرنس میں ملکی سلامتی کی صورتحال سے متعلق اہم فیصلے کئے گئے ہیں۔دی نیشن کے مطابق ذرائع نے بتایا کہ کور کمانڈرز نے طالبان سے مذاکرات اور افغانستان میں الیکشن کے بعد کی صورتحال پر تفصیلی تبادلہ خیال کیا۔ اس موقع پر قومی سلامتی کے حوالے سے متعدد اہم فیصلے کئے گئے۔