یوکرائن میں یرغمال یورپی فوجی مبصرین کو رہا کرایا جائے‘ جرمنی‘ روس کی مدد کی یقین دہانی

03 مئی 2014

ماسکو (آن لائن) روسی صدر ولادیمیر پیوٹن نے جرمن چانسلر انجیلا  مرکل سے کہا ہے کہ یوکرائن کے مسئلے کے حل کے لیے یوکرائنی فوجوں کا ملک کے جنوب مشرقی علاقوں سے نکلنا، تشدد کا خاتمہ اور قومی سطح پر ڈائیلاگ کا آغاز اہم اقدامات ہیں۔کریملن کے مطابق  جرمن چانسلر انجیلا  مر کل نے روسی صدر ولادیمیر پیوٹن سے ٹیلی فونک گفتگو میں یورپی ملٹری مبصرین کی رہائی میں مدد کی یقین دہانی کرائی ہے۔ یورپی مبصرین یوکرائن میں روس نواز علیحدگی پسندوں کی قید میں ہیں۔جرمن حکومت کی  تر جما ن  کرسٹیانے ورٹز کے مطابق چانسلر مرکل اور روسی صدر نے یورپی تحفظ و تعاون کی تنظیم کے مبصرین کو یرغمال بنائے جانے کے معاملے پر تبادلہ خیال کیا۔ دونوں رہنماؤں نے یوکرائن میں انتخابات پر تبادلہ خیال کیا۔جرمن چانسلر نے روسی صدر سے یورپی ملٹری مبصرین کی رہائی میں مدد کی بھی درخواست کی ہے۔ گزشتہ روز جرمن چانسلر امریکہ کے دورے پر پہنچیں اور صدر اوباما سے ملاقات کی۔ یوکرائن کے حکام کے مطابق انسداد دہشت گردی کارروائیوں  کے دوران روس نواز باغیوں نے دو ہیلی کاپٹر مار گرائے جس سے ایک پائلٹ اور ایک فوجی ہلاک ہو گیا۔