نوابشاہ :مال گاڑی پٹڑی سے اتر گئی‘ ٹرینوں کی آمد و رفت معطل‘ ہزاروں مسافر پھنس گئے

03 مارچ 2010
لاہور / نواب شاہ (سٹاف رپورٹر + ریڈیو نیوز) نواب شاہ میں پشاور سے کراچی جانے والی وزیرک مینشن مال گاڑی کے 11 ڈبے اچانک ٹریک سے اتر گئے جس کے باعث سندھ سے ملک کے دیگر علاقوں کو آنے اور جانے والی ریلوے ٹریفک معطل ہو گئی ‘ 8 ایکسپریس ٹرینوں کو مختلف سٹیشنوں پر روک لیا گیا جس سے ہزاروں مسافر جن میں اکثریت خواتین اور بچوں کی ہے پھنس کر رہ گئے۔ چیئرمین ریلوے نے تحقیقات کا حکم دے دیا۔ تفصیلات کے مطابق حادثہ سکھر ڈویژن میں دور اور نواب شاہ کے درمیان ہوا، پشاور سے کراچی جانے والی وزیر مینشن سپیشل گڈز ٹرین کے 11 ڈبے گزشتہ صبح ساڑھے 11 بجے پٹڑی سے اتر گئے جس سے ٹرینوں کی اپ اینڈ ڈاﺅن آمد و رفت معطل ہو گئی کسی جانی نقصان کی اطلاع نہیں ملی۔ حادثے کے نتیجے میں کراچی سے پنجاب اور دیگر علاقوں کو جانے والی عوام ایکسپریس کو ٹنڈو آدم، سپر ایکسپریس کو حیدر آباد، چناب ایکسپریس کو نواب شاہ جبکہ شالیمار اور شاہ رکن عالم ایکسپریس کو سرہاری سٹشنوں پر روک دیا گیا جبکہ پنجاب سے سندھ جانیوالی سپر ایکسپریس کو پڈ عیدن، عوام ایکسپریس کو بریاروڈ اور فرید ایکسپریس کو باندی میں روک دیا گیا۔ریلوے حکام نے کراچی سے آنیوالی علامہ اقبال اور قراقرم ایکسپریس جبکہ پنجاب سے جانے والی چناب اور شاہ رکن عالم ایکسپریس کو متبادل راستوں سے روانہ کر دیا ہے۔ ریلوے حکام کا کہنا ہے کہ شام تک اپ سائیڈ کا راستہ صاف کر دیا۔ نیٹ نیوز کے مطابق حادثہ نواب شاہ آﺅٹر سگنل پر پیش آیا۔ کراچی جانے والے مال گاڑی کے گیارہ ڈبے گر گئے پٹڑی سے ڈبے ہٹانے کے لئے روہڑی سے امدادی ٹرین اور عملہ طلب کیا گیا ریلوے کے اپ اور ڈاﺅن ٹریک بند ہونے کی وجہ سے ہزاروں مسافر پھنس گئے حادثے کی وجہ معلوم نہیں ہو سکی۔ عینی شاہدین کے مطابق حادثہ ٹرین ڈرائیور کے اچانک بریک لگانے سے پیش آیا۔ حادثے کے بعد مال گاڑی تین حصوں میں تقسیم ہو گئی ۔ ثناءنیوز کے مطابق کئی گھنٹے بعد ریلوے ٹریک بحال کرکے مختلف سٹیشنوں پر کھڑی ٹرینوں کو اپنی منزل کی جانب روانہ کر دیا گیا۔