تاجروں کیلئے وزیراعظم کی سکیم سے ٹیکس نیٹ کو وسعت ملے گی:شیخ ندیم

03 جنوری 2016

فیصل آباد (نمائندہ خصوصی) فیصل آباد چیمبر آف کامرس اینڈ انڈسٹری کے سابق سینئرنائب صدر نے شیخ ندیم اللہ والا نے کہاہے کہ وزیراعظم میاںنوازشریف کی طرف سے تاجروں کیلئے رضاکارانہ ٹیکس سکیم سے ٹیکس کی بنیاد کو وسعت ملے گی اور ریونیو میں اضافہ ہو گا۔ انہوں نے اس امید کا اظہار کیا کہ رضاکارانہ ٹیکس سکیم کے اجراءسے معیشت پر مثبت اثر پڑنے کی توقع ہے کیونکہ اس سکیم کے تحت ٹیکس ادا نہ کرنے والے تاجر 31جنوری 2016تک 50کروڑ تک کے ورکنگ کیپٹل پر صرف ایک فیصد ٹیکس ادا کر کے ٹیکس دہندہ بن سکتے ہیں۔انہوں نے کہا کہ پاکستان میں موجودہ ٹیکس نظام کافی پیچیدہ ہے جس وجہ سے بہت سے لوگ ٹیکس کے دائرے میں آنے سے کتراتے ہیں تاہم اس سکیم سے ملکی معیشت کواستحکام ملے گا۔ انہوں نے کہا کہ بینکوں کے لین دین پر 0.6فیصد ودہولڈنگ ٹیکس کے نفاذ کے فیصلے سے تاجر برادری اور حکومت کے درمیان کافی کشیدگی پیدا ہو گئی تھی کیونکہ تاجر اس ٹیکس کے نفاذ سے خوش نہیں تھے۔ انہوں نے اس توقع کا اظہار کیا کہ رضاکارانہ ٹیکس سکیم کے نفاذ سے وہ کشیدگی ختم ہو جائے گی ۔ انہوں نے کہا کہ ٹیکس ادا نہ کرنے والے تاجروں کیلئے یہ ایک اچھا موقع ہے کہ وہ اس سکیم سے فائدہ اٹھاتے ہوئے ریگولر ٹیکس دہندہ بن جائیں کیونکہ حکومت نے ان کی شکایات کا ازالہ کر دیا ہے۔ چند دوسرے ممالک نے بھی ایسی سکیموں کا اجرا کر کے ٹیکس ریونیو کو بہتر کیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ موجودہ حالات میں جبکہ ملک میں ٹیکس ٹو جی ڈی پی کی شرح مطلوبہ معیار سے کافی کم ہے یہ ایک اچھا اقدام ہے کیونکہ اس سے بہت سے نئے لوگ ٹیکس کے دائرے میں آئیں گے جس سے ٹیکس کی بنیاد کو وسعت ملے گی۔