پاکستان کی طرف سے پٹھان کوٹ ائربیس پر دہشت گردی کی مذمت

03 جنوری 2016

بھارت میں پٹھان کوٹ ائربیس پر دہشت گردوں کا حملہ 4دہشت گرد اور 4فوجی ہلاک، دونوں طرف سے کئی گھنٹے فائرنگ کا تبادلہ، پاکستانی دفتر خارجہ کی طرف سے حملے کی شدید مذمت۔
بھارتی صوبہ پنجاب میں امرتسرکے قریب پٹھان کوٹ ائربیس پر حملہ کوئی سوچی سمجھی سازش ہو سکتی ہے کیونکہ اطلاعات کے مطابق یہاں رات سے ہی سکیورٹی سخت کر دی گئی تھی اور صبح یہ حملہ ہو گیا۔ دوسری طرف یہ علاقہ پاکستانی سرحد کے قریب ہے اسکے علاوہ ایک ہفتہ قبل ہی بھارتی وزیراعظم لاہور آئے جہاں انہوں نے وزیراعظم نواز شریف کی سالگرہ اور انکی نواسی کی رسم حنا کی تقریب میں خصوصی شرکت کی جس سے دونوں ممالک کے درمیان تعلقات میں بہتری کے آثار نظر آنے لگے تھے۔ اب یہ حملہ تعلقات میں پیدا ہونیوالی گرم جوشی کو متاثر کرتا ہے یا نہیں اس کا اندازہ بھارتی ردعمل سے جلد ہو جائےگا جو ہمیشہ ہر واردات کا ملبہ پاکستان پر ڈالنے کا عادی ہے۔ پاکستان کی وزارت خارجہ نے اس حملے کی شدید مذمت کی ہے۔ بھارت جو ہر جگہ دہشت گردی کا شور مچاتا ہے اور پاکستان پر دشنام طرازی سے باز نہیں آتا ہے۔ اب اسے اپنے اندر پلنے والے دہشتگردوں کی طرف توجہ دینا ہو گی۔ پاکستان پر الزام تراشی کی بجائے اب بھارت کو اب اندر قائم دہشتگردی کے اڈوں اور دہشتگرد تنظیموں کے خاتمہ کےلئے کام کرنا ہو گا۔