A PHP Error was encountered

Severity: Notice

Message: Undefined index: category_data

Filename: frontend_ver3/Templating_engine.php

Line Number: 35

پٹرول دو روپے 87پیسے / ڈیزل ایک روپے 79پیسے اور مٹی کا تیل ایک روپے 64 پیسے لٹر سستا

01 جون 2012
اسلام آباد+ لاہور (خبرنگار+ سٹاف رپورٹر+ نوائے وقت رپورٹ+آئی این پی) وزارت خزانہ نے آئل اینڈ گیس ریگولیٹری اتھارٹی (اوگرا)کی جانب سے پٹرولیم مصنوعات میں 13روپے تک کمی کی سفارش کو مسترد کرتے ہوئے قیمتوں میں معمولی کمی کی منظوری دیدی، قیمتوں میں کمی کے جاری کردہ نئے نوٹیفکیشن کے مطابق پٹرول دو روپے 87پیسے جبکہ ڈیزل ایک روپے 79پیسے اور مٹی کا تیل ایک روپے 64 پیسے لٹر سستا ہوا ہے، نئی قیمتوں کا اطلاق ہو گیا ہے۔ اوگرا نے وزارت خزانہ کو عالمی مارکیٹ میں تیل کی قیمتوں میں گراوٹ کے رجحان کے باعث ملک میں بھی قیمتیں کم کرنے کی سمری بھجوائی تھی جس میں پٹرول 3.39 روپے فی لٹر‘ ہائی سپیڈ ڈیزل 1.23 روپے‘ لائٹ ڈیزل 5.84 روپے، ہائی اوکٹین (ایچ او بی سی) 13 روپے فی لٹر اور مٹی کا تیل 5.90 روپے سستا کرنے کی سفارش کی تھی پٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں کمی سے متعلق ایک گھنٹے میں دوسرا نوٹیفیکیشن جاری کیا گیا۔ پٹرولیم لیوی 3.80 روپے تک بڑھا دی گئی ہے ۔ پٹرولیم مصنوعات کی قیمتیں 15 جون تک نافذ العمل رہیں گی۔ عوام کا موقف ہے پٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں لیوی عائد نہ کی جاتی تو عوام کو مزید ریلیف مل سکتا تھا۔ اے پی اے کے مطابق عوام کیساتھ حکومت ایک بار پھر ہاتھ کر گئی، اقتصادی سروے سے پہلے جاری ہونے والا پٹرولیم مصنوعات میں کمی کا نوٹیفکیشن واپس لیکر عوام سے ریلیف چھین لیا گیا، اوگرا نے پہلے نوٹیفکیشن میں ہائی سپیڈ ڈیزل کے نرخ میں 1.23 روپے کمی اعلان کیا لیکن پھر دوسرا نوٹیفکیشن آگیا جس میں 1.79 روپے کمی کا اعلان کیا گیا جس کے بعد قیمت 105.21 روپے ہوگئی۔ پٹرول کی قیمت میں پہلے 3.39 روپے کمی کا اعلان کیا گیا لیکن نئے اعلان میں صرف 2.87 پیسے کمی کی گئی۔ پٹرول کی نئی قیمت 100.49 روپے ہوگی۔ مٹی کے تیل کی قیمت میں پہلے 5.90 روپے کم کرنے کا اعلان کیا پھر 1.64 روپے کمی کا نوٹیفکیشن آ گیا۔ مٹی کا تیل 98.31 روپے لٹر ملے گا۔ لائٹ ڈیزل آئل کی قیمت میں پہلے 5.84 روپے کمی کی گئی پھر 2.52 روپے کمی کا اعلان آگیا جس کے بعد لائٹ ڈیزل آئل کی قیمت 94.91 روپے ہوگئی۔ ایچ او بی سی کی قیمت میں پہلے 10.74 روپے کی کمی کی گئی لیکن دوسرے نوٹیفکیشن میں اسے کم کرکے 4.49 روپے کردیا گیا۔ ایچ او بی سی کی نئی قیمت 131.32 روپے ہوگی۔ یکم جون سے پٹرول پر پٹرولیم لیوی 8.86روپے فی لٹر سے بڑھ کر 10روپے، ہائی آکٹین پر 11.84سے 14روپے، مٹی کے تیل پر 5.15 روپے سے 6 روپے، ہائی سپیڈ ڈیزل پر 4.20روپے سے 8روپے فی لٹر کردی گئی ہے۔ پیٹرولیم لیوی بڑھانے سے حکومت کو 15روز میں تےن ارب روپے اضافی ریونیو حاصل ہو گا۔ علاوہ ازیں اوگرا کی طرف سے پیٹرولیم مصنوعات کی قیمت میں کمی کے اعلان کے باوجود لاہور شہر کے بیشتر پیٹرول پمپوں کی طرف سے صارفین کو پرانی قیمتوں پر پٹرول اور ڈیزل فروخت کیا جاتا رہا جس پر صارفین اور پمپ مالکان کے درمیان گرما گرمی اور سخت الفاظ کا تبادلہ ہوتا رہا، پمپ مالکان کا کہنا تھا انہیں اوگرا کا نیا نوٹیفکیشن موصول نہیں ہوا جبکہ صارفین کا مو¿قف تھا جب تیل کی قیمتیں بڑھتی ہیں تو پمپ مالکان ٹی وی پر خبر چلتے ہی نئی قیمتیں لاگو کر دیتے ہیں مگر جب ان مصنوعات کی قیمتیں کم ہوتی ہیں تو اگلی صبح تک صارفین سے پرانی قیمتیں لیکر انکی منافع خوری کرتے ہیں۔ صارفین نے چیف جسٹس سے اپیل کی وہ صارفین سے لوٹ مار میں ملوث عناصر کیخلاف از خود نوٹس لیں۔
لاہور (سٹاف رپورٹر) حکومت نے سی این جی کی قیمتوں میں کمی کا نوٹیفکیشن بھی واپس لے لیا۔ قبل ازیں سی این جی کی قیمتوں میں 2.85 روپے تک کمی کی گئی تھی۔ آل پاکستان سی این جی ایسوسی ایشن کے عہدیداروں غیاث پراچہ، راجہ شجاع انور، عرفان غوری کا کہنا ہے اس حوالے سے لائحہ عمل طے کرنے کےلئے پنجاب کی جنرل باڈی کا اجلاس آج بروز جمعہ 3 بجے بلا لیا ہے اور اجلاس کے بعد ہم حکومتی اقدام کےخلاف احتجاج کرینگے اور مظاہرہ کیا جائےگا۔