حافظ آباد، کامونکے : نعشیں نکال لی گئیں، کمسن لڑکی سمیت 3بچے جوہڑ میں ڈوب گئے

Aug 01, 2018

حافظ آباد + کامونکے (نامہ نگاران) بارشی پانی کے جوہڑ میں نہاتے ہوئے دو بچے ڈوب کر جاں بحق ہو گئے۔ ریسکیو 1122کے اہلکاروں نے دونوں بچوں کی نعشیں نکال لیں۔گڑھی غوث کے گیارہ سالہ علی حسن اور نو سالہ بلال بارش کے کھڑے میں نہاتے ہوئے ڈوب گئے۔ اہلخانہ انکی تلاش کرتے رہے تاہم جوہڑ کے باہر بچوں کے جوتے ملنے پر ریسکیو1122کے اہلکاروں کو اطلاع دی گئی جنہوں نے دونوں علی حسن اور بلال کی نعشیں جوہڑ سے نکال لیں۔گھر پہنچنی تو ہر آنکھ اشکباراور علاقہ میں کہرام برپا ہو گیا، بچوں کی والدہ اور عزیز رشتہ دار دھاڑیں مار مار کرتے روتے رہے۔ بچوں کے لواحقین کا کہنا تھا کہ بھٹہ خشت مالکان نے مٹی حاصل کرنے کے لئے کئی کئی فٹ گہرے گڑھے کھود رکھے ہیں جن میں پانی جمع ہو جاتا ہے۔ انہوں نے مطالبہ کیا کہ ان گڑھوں کو فوری طور پر بند کر کے مالکان کے خلاف کارروائی عمل میں لائی جائے۔ کامونکے میں بھی کمسن بچی بھٹہ خشت کے تالاب میں ڈوب کر جاں بحق ہوگئی۔ تھانہ صدر کے علاقہ کوٹ رفیق میںبشیر چیمہ نامی کے بھٹہ خشت کے مزدور محمدآصف بھلر سکنہ کوٹ رفیق کی سات سالہ بیٹی سمیرا بی بی جو اسے بھٹہ خشت پر کھانا دیکر واپس چلی گئی تاہم شام ساڑھے چھ بجے تک گھر نہ پہنچنے پر اسکی تلاش شروع کی گئی تواس کی نعش قریبی بھٹہ خشت یاسین رحمانی کے پانی والے تالاب سے ملی جس کی وہاں پر موت پائوں پھسلنے سے ہوئی یا کسی اور وجہ سے صدر پولیس مصروف تفتیش ہے۔

مزیدخبریں