بال ٹیمپرنگ :ڈیوڈ وارنر نے زارو قطار رو کر معافی مانگ لی ‘انٹر نیشنل کرکٹ چھوڑنے کا اعلان

01 اپریل 2018

سڈنی(سپورٹس ڈیسک) بال ٹیمپرنگ سکینڈل میں معطل آسٹریلوی کرکٹر ڈیوڈ وارنر نے انٹرنیشنل کرکٹ چھوڑنے کا اعلان کردیا‘ پریس کانفرنس میں شائقین سے معافی مانگی۔وارنر نے زارو قطارروتے ہوئے کہا کہ جو کچھ ہوا شرمندگی اور افسوس ہے ‘اپنے اہلخانہ خاص طور پر بیوی اور بیٹیوں سے معافی مانگتا ہوں، میں کھیل اور ساتھیوں سے پیار کرتا ہوں۔
، میں نے انہیں دھوکہ دیا ہے، بہت کم امید ہے کہ میں اب ملک کیلئے کھیل سکوں گا۔ ڈیوڈ وارنر نے کہا کہ وہ اپنے عمل کے ذمے دار ہیں اور یہ ان کے لیے بڑے کرب کے لمحات ہیں، سڈنی میں جو واقعہ ہوا وہ اس کی ذمہ داری قبول کرتاہوں۔رواں ماہ کیپ ٹاو¿ن میں جنوبی افریقہ اور آسٹریلیا کے درمیان تیسرے ٹیسٹ کے دوران آسٹریلوی کھلاڑی کیمرون بینکرافٹ بال ٹیمپرنگ کرتے ہوئے پکڑے گئے تھے۔ میچ کے بعد کپتان سٹیون سمتھ نے سنگین جرم کا اعتراف کرتے ہوئے بتایا تھا کہ اس حرکت میں ٹیم کی پوری قیادت ملوث ہے۔ اس معاملے پر سٹیون سمتھ اور نائب کپتان ڈیوڈ وارنر کوعہدوں سے ہٹادیا گیا۔ پھر آسٹریلوی کرکٹ بورڈ نے سٹیو سمتھ اور ڈیوڈ وارنر دونوں پر ایک ایک سال کی پابندی عائد کردی۔ انٹرنیشنل اور ڈومیسٹک کرکٹ کے بعد دونوں کھلاڑیوں کو آئی پی ایل سے بھی نکال دیا گیا۔جنوبی افریقہ سے واپسی پر سڈنی انٹرنیشنل ایئرپورٹ پر صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے سٹیو سمتھ نے روتے ہوئے معافی مانگی اور کہا کہ کیپ ٹاون ٹیسٹ میں بال ٹمپرنگ کا واقعہ میری قیادت کی نااہلی ہے اور میری غلطی ہے، اپنی غلطی اور اس سے ہونے والے نقصان کے ازالہ کے لیے سب کچھ کروں گا۔