دنیا کو اب پاکستان اور افغانستان کے بارے میں امریکہ کی نئی پالیسی نظر آئے گی: امریکی صدر باراک اوبامہ

دنیا کو اب پاکستان اور افغانستان کے بارے میں امریکہ کی نئی پالیسی نظر آئے گی:  امریکی صدر باراک اوبامہ

انہوں نے یہ بات واشنگٹن میں امریکی کانگریس کے مشترکہ اجلاس سے اپنے پہلے خطاب میں کہی۔ امریکی صدر کا کہنا تھا کہ القاعدہ کو محفوظ پناہ گاہوں سے امریکہ پر حملے کرنے کی اجازت نہیں دیں گے۔ باراک اوبامہ نے کہا کہ وہ فوجیوں کی تنخواہوں میں اضافہ کریں گے اور انہیں مزید سہولیات فراہم کریں گے۔ امریکہ تشدد پر یقین نہیں رکھتا۔ گوانتا ناموبے جیل بند کرنے سے امریکہ مزید مضبوط ہوگا۔ دہشت گردوں کو فوری اور یقینی انصاف کے عمل سے گزارا جائے گا۔ باراک اوبامہ نے مزید کہا کہ القاعدہ اور انتہا پسندی کے خاتمے کے لئے پاکستان اور افغانستان سے تعاون کرنا ہوگا۔ امریکی صدر نے اپنے خطاب میں مالیاتی بحران پر جلد قابو پانے کی امید ظاہر کی اور کہا کہ بیل آؤٹ پیکج کے ذریعے آئندہ دو سال کے دوران پینتیس لاکھ نئی ملازمتیں پیدا ہوں گی۔ مالیاتی پیکج معیشت کی بہتری کی جانب پہلا قدم ہے۔ باراک اوبامہ نے کہا کہ وقت آگیا ہے کہ امریکہ ایک بارپھردنیا کی قیادت کرے۔ امریکی صدر نے عوام کو تعلیم کی سہولت پہنچانے کے لئے ستر لاکھ نئے سکولوں کی تعمیر کا بھی اعلان کیا۔