دبئی ٹیسٹ : جنوبی افریقہ کے 2 کھلاڑی بال ٹمپرنگ کرتے پکڑے گئے

دبئی ٹیسٹ : جنوبی افریقہ کے 2 کھلاڑی بال ٹمپرنگ کرتے پکڑے گئے

دبئی (نوائے وقت رپورٹ + ایجنسیاں) پاکستان اور جنوبی افریقہ کے درمیان دوسرے ٹیسٹ میچ میں جنوبی افریقہ کے کھلاڑی بال ٹمپرنگ کرتے پکڑے گئے گیند سے چھیڑ چھاڑ کرنے پر پاکستان کو پانچ پینلٹی رنز مل گئے ، ایمپائر نے معائنے کے بعد گیند تبدیل کردی ۔ دبئی میں کھیلے جانے والے دوسرے ٹیسٹ کے تیسرے دن جنوبی افریقہ کے کھلاڑی پاکستان کیخلاف باﺅلنگ کررہے تھے کہ اس دوران کیمرے کی آنکھ نے دو کھلاڑیوں کو بال ٹمپرنگ کرتے پکڑ لیا ۔ جنوبی افریقہ کیخلاف شکائت ملنے پر ایمپائرز نے گیند کا معائنہ کیا اور جنوبی افریقن کھلاڑی گریم سمتھ کو بلایا اور انہیں گیند دکھا کر ان کے باﺅلرز کی شرمناک حرکت سے آگاہ کیا اور اسکے بعد گیند تبدیل کردی۔ اس وقت پاکستان کے 3 کھلاڑی پویلین لوٹ چکے تھے تاہم یونس خان اور مصباح کھیل رہے تھے، جنوبی افریقہ کے باﺅلر فلینڈر نے ہاتھ کے ناخن سے گیند کوکھرچا جبکہ فاف ڈ وپلیسی نے اپنے ٹراﺅزر کی زپ سے بال کو رگڑ کر ٹمپرنگ کی ایمپائرز نے دونوں کھلاڑیوں کو سخت وارننگ بھی جاری کردی اور پاکستان کو پانچ پینلٹی رنز دے دیئے بال ٹمپرنگ کا کیمرے میں سامنے آنے والا یہ پہلا کیس ہے اور کھلاڑیوں پر آئی سی سی کی جانب سے پابندی بھی لگ سکتی ہے۔ علاوہ ازیں ڈ وپلیسی کو بال ٹمپرنگ کے الزام میں کارروائی کا سامنا ہے۔ نجی ٹی وی کے مطابق آئی سی سی میچ ریفری ڈیوڈ بون نے ڈ وپلیسی کو بال ٹمپرنگ میں قصوروار پایا ہے اور ڈ وپلیسی کو ایک ٹیسٹ، دوون ڈے میچز کی پابندی کا سامنا کرنا پڑ سکتا ہے۔ آئی سی سی نے ڈ وپلیسی کے خلاف کارروائی کے بارے میں تبصرے سے گریز کیا ہے آئی سی سی ڈ وپلیسی کے خلاف سزا کا اعلان آج کر سکتی ہے۔ واضح رہے کہ 2006ءمیں اوول ٹیسٹ میں امپائرز نے پاکستان پر بال ٹیمپرنگ کا الزام لگا کر انگلینڈ کو پانچ رنز دیئے تھے۔ پاکستان کے کپتان انضمام الحق نے اس وقت فیصلہ کیا تھا کہ وہ میچ کو جاری نہیں رکھیں گے۔ اس فیصلے کے نتیجے میں امپایر ڈیرل ہیئر نے میچ کا فیصلہ انگلینڈ کے حق میں دیدیا تھا۔ آئی سی سی نے حال ہی میں بال ٹیمپرنگ کے قوانین میں تبدیلی کی ہے۔ نئے قوانین کے تحت اگر بال ٹیمپرنگ میں کسی کھلاڑی کی نشاندہی ہوجاتی ہے تو گیند کو تبدیل کردیا جائیگا اور دوسری ٹیم کو 5 رنز دیدئیے جائیں گے اور بال ٹیمپرنگ کرنیوالے کھلاڑی کی رپورٹ کی جائیگی۔ آئی سی سی قوانین کے مطابق بال ٹمپرنگ پر پوری ٹیم کو 50 سے 100 فیصد میچ فیس کا جرمانہ ہوسکتا ہے یا پھر ایک ٹیسٹ میچ کی پابندی لگائی جا سکتی ہے۔ 2 ون ڈے میچز یا 2 ٹی ٹونٹی میچوں سے بھی باہر کیا جا سکتا ہے۔ علاوہ ازیں آئی سی سی میچ ریفری ڈیوڈ بون نے پاکستانی آف سپنر سعید اجمل کو وارننگ جاری کر دی نجی ٹی وی کے مطابق سعیداجمل پر وکٹ لینے کے بعد امپائر این گولڈسے بدتمیزی کا الزام تھا۔ تیسرے روز کے کھیل کے بعد جنوبی افریقہ کے کھلاڑی اے بی ڈی ویلیئرز نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ جنوبی افریقہ کی ٹیم بے ایمان نہیں ہے نہیں معلوم امپائرز کو کب یہ لگا کہ بال کی ٹمپرنگ کی جا رہی ہے۔
ٹمپرنگ پکڑی گئی