پی سی بی نے 20 خواتین کرکٹرز کو سنٹرل کنٹریکٹ دینے کی منظوری دیدی

لاہور (سپورٹس رپورٹر/مانیٹرنگ نیوز) پی سی بی گورننگ بورڈ نے 20 خواتین کرکٹرز کو سنٹرل کنٹریکٹ دینے اور 60 سال سے زائد سابق کرکٹرز کے اعزازیہ میں اضافے کی منظوری دیدی ہے۔ تفصیلات کے مطابق پاکستان کرکٹ بورڈ کی گورننگ باڈی کا 18 واں اجلاس چیئرمین پی سی بی اعجاز بٹ کی صدارت میں گذشتہ روز قذافی سٹیڈیم لاہور میں منعقد ہوا جس میں گورننگ بورڈ کے ارکان جاوید میانداد، میر حیدر علی خان تالپور، میجر (ر) سید نعیم اختر گیلانی، عامر نواب، چوہدری انور علی، نوید اکرم چیمہ، سبحان احمد (چیف آپریٹنگ آفیسر) اور میاں رضا احمد (چیف فنانس آفیسر) نے شرکت کی جبکہ طارق بلوچ، انتخاب عالم اور وزیر علی کھوجہ بیرون ملک ہونے کی وجہ سے شریک نہیں ہوئے۔ اجلاس میں چیف فنانس آفیسر کی طرف سے جون 2010ءتک ختم ہونے والے مالی سال کی آڈٹ رپورٹ پیش کی گئی جسے طویل بحث کے بعد منظور کر لیا گیا۔ گورننگ بورڈ نے پاکستان کرکٹ بورڈ میں اینٹیگریٹی کمیٹی کی پوسٹ کی بھی منظوری دی گئی۔ اجلاس میں پاکستان کرکٹ بورڈ کی قائم کردہ ثالثی کمیٹی کے ارکان میں دو ریٹائرڈ ججز جن میں جسٹس (ر) محمد سعید اختر اور جسٹس (ر) فضل میراں کا اضافہ کیا گیا جس کے بعد ثالثی کمیٹی کے ارکان کی تعداد پانچ ہو گئی۔ گورننگ بورڈ نے پی سی بی ویلفیئر پالیسی پر تفصیلی غور کیا گیا جس کے بعد 60 سال سے زائد عمر کے سابق کرکٹرز کے اعزازیہ میں اضافے کی منظوری دی گئی۔ویمن کھلاڑیوں کو یکم جنوری سے تین مختلف کیٹگریز میں سنٹرل کنٹریکٹ دیا جائے گا۔