کے الیکٹرک نے پانچ انٹرنیشنل فٹبالرز کو فارغ کردیا

کراچی(اسپورٹس رپورٹر) پاکستان پریمئر لیگ کی چیمپئن ٹیم کے الیکٹرک کی انتظامیہ نے ٹیم کے پانچ کھلاڑیوں کے معاہدے میں توسیع نہ کرکے ان کو فارغ کرنے کا فیصلہ کرلیا۔ ذرائع کے مطابق فارغ شدہ پانچویں فٹبالرز انٹر نیشنل مقابلوں میں ملک کی نمائندگی کرچکے ہیں۔ واضح رہے کہ کے الیکٹرک نے دو سال قبل کراچی سے تعلق رکھنے والے 12 فٹبالرز کو فارغ کیا تھا اور اس سال جنوری میں فارغ شدہ تمام کھلاڑیوں کا تعلق بھی کراچی سے ہے۔ فٹبال حلقوں کے مطابق کے الیکٹرک کی اسپورٹس پالیسی سمجھ سے باہر ہے۔ کراچی کے اربوں روپے ریونیو حاصل کرنے والے ادارے کے افسران کراچی سے تعلق رکھنے والے فٹبالرز کو فارغ کرکے بیرون کراچی کے فٹبالرز کو ٹیم برقرار رکھنے کی پالیسی پر عمل پیرا ہیں۔ فٹبال حلقوں کے مطابق ادارہ مالی مشکلات کے بہانے کراچی کے ہی کھلاڑیوں کو کیوں فارغ کردیا ہے یہ ایک سوالیہ نشان ہے۔ ادارے کے ایک سابق فٹبالر نے بتایا کہ جنوری2018ء سے 

عبد الغفور احمد لال‘ سہیل بلوچ‘ سہیل احمد اور محمد زاہد کے معاہدہ کو ختم کردیا گیا ہے۔ واضح رہے کہ کے الیکٹرک کی ٹیم مینجمنٹ نے ان کھلاڑیوں کو دیگرٹیموں حبیب بنک کے پی ٹی اور پولیس سے حاصل کیا تھا جہاں ان کی ملازمت کنفرم تھی۔