اولمپکس: چوتھے دن کا پہلا تمغہ جرمنی کے نام‘ 3 دنوں میں 20 لاکھ افراد کی شرکت

اولمپکس: چوتھے دن کا پہلا تمغہ جرمنی کے نام‘ 3 دنوں میں 20 لاکھ افراد کی شرکت

لندن (نوائے وقت رپورٹ)اولمپکس کے چوتھے دن کا پہلا تمغہ جرمنی کے نام رہا۔برطانیہ کے دارالحکومت لندن میں جاری تیسویں اولمپکس مقابلوں کے چوتھے دن تیئیس کھیلوں کے مقابلے ہو رہے ہیں جن میں پندرہ طلائی تمغوں کا فیصلہ ہوگا۔اب تک ان مقابلوں میں انتالیس طلائی تمغے جیتے جا چکے ہیں۔ فہرست میں تیسرا نمبر فرانس کا ہے جس نے اب تک چار طلائی، ایک نقرئی اور کانسی کے چار تمغے جیتے ہیں۔برطانوی شہزادی زارا فلپس بھی چاندی کا تمغہ جیتنے والی برطانوی ٹیم کی رکن ہیں۔لندن اولمپکس کے چوتھے دن پہلا طلائی تمغہ جرمنی نے گھڑسواری کے کھیل میں ٹیم ایونٹ میں حاصل کیا ہے۔گرینچ میں ہونے والے مقابلے میں برطانوی ٹیم چاندی کا تمغہ حاصل کرنے میں کامیاب رہی جبکہ نیوزی لینڈ نے کانسی کا تمغہ جیتا۔ شہزادی زارا نے گھڑسواری کے انفرادی مقابلوں کے حتمی مرحلے کے لیے بھی کوالیفائی کر لیا ہے۔ سب سے زیادہ طلائی تمغوں کا فیصلہ تیراکی میں ہونا ہے۔ تیراکی میں خواتین دو سو میٹر فری سٹائل اور دو سو میٹر انفرادی میڈل میں حصہ لیں گی جبکہ مرد تیراک چار ضرب دو سو میٹر فری سٹائل ریلے اور دو سو میٹر بٹرفلائی مقابلوں میں حصہ لیں گے۔ امریکی تیراک مائیکل فیلپس بھی ایکشن میں دکھائی دیں گے۔ ویٹ لفٹنگ میں خواتین تریسٹھ کلوگرام کی درجہ بندی اور مرد ویٹ لفٹر انہتر کلوگرام کی درجہ بندی میں مدِمقابل ہوں گے۔مائیکل فلپس دو سو میٹر بٹر فلائی مقابلوں کے فائنل میں حصہ لیں گے۔نشانہ بازی کے کھیل میں لندن کے رائل آرٹلری بیرکس میں جاری سکیٹ شوٹنگ کے مقابلے بھی حتمی مرحلے میں داخل ہو گئے۔ آرٹسٹک جمناسٹک، شمشیر زنی، کنوئنگ اور ڈائیونگ شامل ہیں۔آرٹسٹک جمناسٹک میں خواتین کا ٹیم فائنل، شمشیر زنی میں مردوں کا انفرادی فوائل، کنوئنگ میں مردوں کا کنوئنگ سنگل اور ڈائیونگ میں خواتین کے سنکرونائزڈ دس میٹر پلیٹ فارم مقابلے کھیلے جائیں گے۔ اولمپکس کے پہلے تین دن میں 2.1 ملین افراد نے شرکت کی۔ اگرچہ خالی سیٹوں پر تنقید بھی کی گئی۔ پہلے دن 86 فیصد ٹکٹ ہولڈر، دوسرے دن 92 جبکہ تیسرے دن 88 فیصد ٹکٹ ہولڈرز نے شرکت کی۔