شاہد خاقان ایف 16 میں بیٹھ کر فوجی مشقوں کا جائزہ لینے والے پہلے وزیراعظم

سرگودھا (نیٹ نیوز+ صباح نیوز) وزیراعظم شاہد خاقان عباسی نے پاک فضائیہ کے آپریشنل بیس کا دورہ کیا۔ مصحف ائربیس آمد پر ایئرچیف مارشل سہیل امان نے وزیراعظم کا استقبال کیا۔ وزیراعظم نے نئے تعمیر شدہ ائر پاور سینٹر آف ایکسی لینس کا دورہ کیا۔ وزیر اعظم کو سیفرون بینڈڈ نامی فوجی مشقوں کے بارے میں بریفنگ بھی دی گئی۔ وزیراعظم کو بتایا گیا ائر پاور سینٹر آف ایکسی لینس جدید ترین آلات سے لیس ادارہ ہے جو اکتوبر میں کثیر الملکی فوجی مشقوں کی میزبانی کرے گا، مشقوں میں 19ممالک کے فضائی دستے شرکت کریں گے۔ وزیر اعظم کو قومی تعمیر و ترقی میں پاک فضائیہ کے کردار سے متعلق بریفنگ بھی دی گئی۔ وزیراعظم نے دورے کے دوران ایوی ایشن سٹی پروجیکٹ میں گہری دلچسپی ظاہر کی۔ ایوی ایشن سٹی پروجیکٹ کامرہ میں ایک جدید سوچ کے ساتھ تعمیر کیا گیا ہے۔ ترجمان پاک فضائیہ کے مطابق وزیراعظم نے ایف 16 طیارے میں بیٹھ کر فوجی مشقوں کا جائزہ لیا، پاک فضائیہ کے سربراہ سہیل امان نے دوسرے ایف 16 جہاز میں بیٹھ کر جاری فوجی مشق میں شرکت کی۔ پاکستان کی تاریخ میں پہلی مرتبہ کسی بھی وزیراعظم نے جہاز میں بیٹھ کر فوجی مشقوں میں شرکت کی ہے۔ وزیر اعظم نے ایف 16 جہاز کے ریئر کاک پٹ میں بیٹھ کر فلائننگ مشن میں حصہ لیا۔ فلائنگ مشن سے لینڈنگ کے بعد وزیر اعظم نے ایئر فورس کے کمبیٹ افسران اور گراؤنڈ کریو کے ساتھ ملاقات کی۔ وزیر اعظم نے پاک فضائیہ کو جدید خطوط پر استوار کرنے پر اطمینان کا اظہار کیا اور کہا پاک فضائیہ دنیا کی جدید ترین فضائیہ میں شامل ہے۔ پاک فضائیہ فضائی حدود کی محافظ ہے، وزیراعظم نے پاک فضائیہ کے عزم و حوصلے کو سراہا اور فضائیہ کی آپریشنل تیاریوں پر اظہار اطمینان کیا۔ صباح نیوز کے مطابق وزیراعظم نے کہا پاک فضائیہ دہشت گردی کے ناسور کے خاتمے میں بھی اہم کردار ادا کر رہی ہے، فضائی حدود کے تحفظ میں پاک فضائیہ کا کردار قابل تعریف ہے۔ وزیراعظم کو قدرتی آفات سے نمٹنے اورامدادی کاموں پر پاک فضائیہ کی خدمات، تعلیم اور صحت کے شعبوں میں بھی خدمات پر بھی بریفنگ دی گئی۔ وزیراعظم نے پاکستان ائرفورس کے وطن کے دفاع کے لئے بہترین کردار کو سراہا۔
شاہد خاقان