کراچی میں آرام باغ میڈیسن مارکیٹ میں بھتہ خوروں کی جانب سے جان سے مارنے کی دھمکی پر دکانداروں نے احتجاج کیا اور دکانیں بند کردیں

کراچی میں ٹارگٹ کلنگ کے واقعات میں کچھ حد تک بہتری آئی ہے لیکن بھتہ خوروں کی جانب سے پرچیوں کا سلسلہ نہیں روکا جاساکا۔ آرام باغ کی میڈیسن مارکیٹ میں چار روز قبل دہشت گرد بھتے کی پرچیاں دے کر گئےاور آج دکانداروں کو بھتہ نہ دینے کی صورت میں جان سے مارنے کی دھمکیاں دی گئیں ۔آل کراچی تاجر اتحاد کے چئیرمین عتیق میر کے مطابق بھتے کی پرچیوں کے حوالے سے قانون نافذ کرنے والے اداروں کو آگاہ بھی کیا گیا لیکن ان کی روک تھام کے لیے کوئی کاروائی نہیں کی گئی۔ میڈیسن مارکیٹ کے دکانداروں نے احتجاج کرتے ہوئے سڑکوں پر ٹائر جائے۔اور دکانیں بند کردیں۔
بھتہ خوروں کے خلاف احتجاج میں تاجروں کے ساتھ ڈاکٹرز نے بھی بھرپور احتجاج کرتے ہوئے حکومت سے مطالبہ کیا کہ بھتہ مافیا کے خلاف موثر کاروائی کرے۔