بلوچستان: ضمنی بلدیاتی انتخابات آزاد امیدواروں نے میدان مار لیا

کوئٹہ (ثناءنیوز+ آئی این پی) بلوچستان کے دس اضلاع کی 98 بلدیاتی نشستوں پر ضمنی انتخاب مکمل ہوگیا اس موقع پر سکیورٹی کے سخت انتظامات کئے گئے تھے۔ الیکشن کمیشن بلوچستان کے مطابق پولنگ کا عمل صبح 8 بجے شروع ہوا جو شام 5 بجے تک جاری رہا۔ 7 دسمبر کے بلدیاتی الیکشن میں رہ جانے والے ضلع ہرنائی کی 74 بلدیاتی نشستوں پر ضمنی الیکشن ہوا۔ صوبے میں ضلع ہرنائی کی 74 اور خالی رہ جانے والی 24 نشستوں کیلئے پولنگ ہو گی۔ صوبائی الیکشن کمشنر سلطان بایزید نے بتایا 331 نشستوں کیلئے کسی نے کاغذات نامزدگی جمع نہیں کرائے۔ آئی این پی کے مطابق جعفرآباد میں بلدیاتی الیکشن میں مسلم لیگ (ن) کے امیدوار نے میدان مار لیا۔ مسلم لیگ (ف) کے امیدوار کو شکست کا سامنا کرنا پڑا۔ خواتین کے پولنگ سٹیشن کو کئی مرتبہ بند کرنا پڑا۔ اسکی اہم وجہ جعلی ووٹ تھے، کئی خواتین جعلی ووٹ ڈالتے ہوئے پکڑی گئی۔ بعض خواتین نے جعلی کارڈ بنوا رکھے تھے۔ اس بات پر مسلم لیگ (ن) اور (ف) کے حامیوں کے درمیان گالم گلوچ بھی ہوا۔ سبی میں ڈومکی گروپ نے میدان مار لیا۔نوائے وقت رپورٹ کے مطابق بلوچستان کے 12 اضلاع میں ضمنی بلدیاتی انتخابات کی98 نشستوں پر پولنگ ہوئی، غیر حتمی اور غیر سرکاری نتائج کے مطابق ضمنی بلدیاتی انتخابات میں آزاد امیدواروں نے میدان مار لیا۔
بلوچستان/ ضمنی انتخاب