صوبائی دارالحکومت لاہور میں ریلوے کالونیوں کی گیس منقطع کرنے کا سلسلہ جاری ہے جس کے خلاف مکینوں نے مغل پورہ میں احتجاجی مظاہرہ کیا۔

صوبائی دارالحکومت لاہور میں ریلوے کالونیوں کی گیس منقطع کرنے کا سلسلہ جاری ہے جس کے خلاف مکینوں نے مغل پورہ میں احتجاجی مظاہرہ کیا۔

ملک بھرمیں بجلی کی بندش نےعوام کو ایک بارپھر گھیرلیا ہے جبکہ دوسری جانب گیس کی لوڈشیڈنگ نے بھی شہریوں کا جینا اجیرن کررکھا ہے۔ لیکن کچھ ایسے افراد بھی ہیں جن کے گیس کنکشن ادائیگی کے باوجود بھی منقطع کردئیے گئے ہیں، یہ لوگ ریلوے ملازمین ہیں جو لاہور کی ریلوے کالونیوں میں رہائش پذیرہیں۔ ان ملازمین کی تنخواہوں سے بجلی اور گیس کے بلوں کی مد میں کٹوتی تو کی جاتی ہے تاہم ریلوے کی جانب سے بل ادا نہ کیئے جانے پر ان غریب ملازمین کے گیس کنکشن منقطع کرنے کاسلسلہ جاری ہے جس پر یہ لوگ سراپا احتجاج ہیں۔
ریلوے کوارٹرزکےمکینوں نے مغلپورہ چوک لاہور میں احتجاجی مظاہرہ کیا اور ٹائر جلا کر دو گھنٹے تک روڈ بلاک رکھی۔ مظاہرین نے ریلوے حکام سے مطالبہ کیا ہے کہ انکی تنخواہوں سے کٹوتی کیا گیا بل سوئی گیس کو دیا جائے تاکہ انکا کنکشن بحال ہوسکے۔
عوام ایک جانب بجلی کی بندش سے پریشان ہیں تو دوسری جانب سوئی گیس لوڈشیڈنگ نے انکی زندگی عذاب بنارکھی ہے لیکن ریلوے حکام کی جانب سے غریب ملازمین کی تنخواہوں سے بجلی و گیس کی مد میں پیسوں کی کٹوتی کے باوجود بل ادا نہ کرنا ریلوے حکام کی غیر سنجیدگی اور نااہلی کا واضح ثبوت ہے۔