سرحد پار شدت پسندوں کے کیمپ دوبارہ فعال ہورہے ہیں چوکس رہنا ہوگا:منموہن

نئی دہلی(آئی این پی) بھارتی وزیراعظم منموہن سنگھ نے کہا ہے کہ جموں و کشمیر میں سرحد پار شدت پسندوں کے کیمپ دوبارہ فعال ہو رہے ہیں جنہیں ناکام کرنے کیلئے چوکنا رہنے کی ضرورت ہے۔ ملک میں سکیورٹی کا نظام ابھی پوری طرح پختہ نہیں، دہلی ہائیکورٹ دھماکوں سے ثابت ہوتا ہے کہ بھارت کی سلامتی کو کتنے خطرات لاحق ہیں، پولیس کے لیے جموں و کشمیر میں اصل امتحان وہاں کے عوام کی امیدوں پر پورا اترنا ہے۔ جمعہ کو یہاں پولیس سربراہان کے اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ جموں وکشمیرمین سرحد کے پار سرگرم شدت پسندوں کے کیمپ تشویش کا باعث ہیں اور ایسی اطلاعات ہیں کہ یہ شدت پسند بھارت میں دارندازی کر رہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ ایسی اطلاعات ہیں کہ سرحد پار کیمپوں میں موجود بڑی تعداد میں شدت پسند جموں و کشمیر میں دراندازی کی کوشش میں ہیں اور ہمیں ان کوششوں کو ناکام کرنے کے لیے چوکس رہنے کی ضرورت ہے۔انہوں نے کہا کہ جموں و کشمیر میں علیحدگی پسند تنظیمیں بھی اب تسلیم کرنے لگی ہیں کہ کشمیر کے مسئلے کا حل تشدد کے بغیر حاصل کیا جا سکتا ہے۔