اہم وزارتی اجلاس: سندھ اور بلوچستان کے درمیان پانی کا تنازعہ طے پا گیا

روہڑی (آن لائن) سندھ اور بلوچستان کے درمیان پانی کے معاملے پر جاری تنازعہ اہم وزارتی اجلاس میں طے پاگیا ہے۔ سندھ نے بلوچستان کو یقین دہانی کرائی ہے کہ صوبے میں پانی کی صورتحال بہتر ہوتے ہی بلوچستان کے حصے میں بھی اضافہ کیا جائیگا، دونوں صوبوں نے نہری پانی کی چوری کو روکنے کیلئے تمام قانون نافذ کرنے والے اداروں سے مدد لینے کا فیصلہ کیا ہے اس سلسلے میں سندھ و بلوچستان کے ایریگیشن حکام کا ایک مشترکہ اجلاس گزشتہ روز سکھر بیراج پر صوبائی وزیر آبپاشی سندھ سید مراد علی شاہ صوبائی وزیر آبپاشی بلوچستان سردار اسلم بزنجو کے زیر صدارت ہوا۔ اجلاس میں پانی کی مجموعی صورتحال کا جائزہ لیا گیا اور سندھ کے ایریگیشن حکام نے اجلاس کو بتایا کہ بلوچستان کی جانب سے سندھ پر پانی روکنے اور چوری کرنے کے الزامات غلط ہیں بلوچستان کے ایریگیشن حکام اپنے حصے کا پانی فراہم کرنے کی ضرورت پر زور دیتے رہے۔ بلوچستان کے صوبائی وزیر آبپاشی نے کہا کہ ہم سندھ حکومت کے موقف اور یقین دھانی پر مطمئن ہوکر جارہے ہیں ہم نے کسی دھرنے کا اعلان نہیں کیا۔