این اے 144 سے امیدوار نے بائیسکل پر انتخابی مہم شروع کر دی

 اوکاڑہ (نامہ نگار) دودھ فروش نے قومی اسمبلی کے انتخابات میں این اے 144 سے کاغذات نامزدگی جمع کرا دیئے۔ بائیسکل پر مزدوری کے ساتھ ساتھ اپنی کمپین شروع کر دی۔ منتخب ہو کر غریب عوام کے مسائل کا تدارک کروں گا۔ شمسیہ کالونی اوکاڑہ کے محنت کش دودھ فروش عتیق الرحمان نے این اے 144 سے قومی اسمبلی کا الیکشن لڑنے کے لئے کاغذات نامزدگی جمع کرا دیئے عتیق الرحمان سات بحوں کا باپ ہے جن میں 3 بیٹے اور چار بیٹیاں ہیں محلہ میں دودھ دہی کی دکان بنا رکھی ہے اور سائیکل پر شہر بھر کے مختلف ہوٹلوں پر دودھ اور دہی سپلائی کرتا ہے۔ اممیدوار قومی اسمبلی عتیق الرحمان نے نوائے وقت سے خصوصی گفتگو کرتے ہوئے کہا قائداعظم محمد علی جناحؒ کے بعد پاکستان کو کوئی مخلص لیڈر میسر نہ ہوا پاکستان کی موجودہ صورتحال کے ذمہ دار موجودہ سیاستدان ہیں جس دن پاکستان کو کوئی مخلص مل گیا پاکستان ترقی یافتہ ملکوں کی صف میں کھڑا ہو جائے گا انہوں نے قدرتی دولت سے مالا مال پاکستان مفاد پرستوں کے قبضے میں آ چکا ہے جس دن پاکستان مفاد پرستوں کے نرغے سے نجات حاصل کرے گا ایک عظیم ملک کے طور پر ابھر کر سامنے آئے گا عتیق الرحمان نے کہا میرا الیکشن لڑنا غریب عوام کے مسائل کا تدارک کی جدوجہد ہے۔ عوام نے مجھے منتحب کیا تو عوامی مسائل کو حل کرنے کے لئے بھرپور جدوجہد کروں گا۔


خ